جے این یو طالب علم نجیب احمد گمشدگی کیس : 9 ملزموں کا ہوگا پالی گراف ٹیسٹ ، کچھ نئے انکشاف کا امکان

جواہر لال نہرو یونیورسٹی جے این یو سے لاپتہ طالب علم نجیب احمد کیس کی اگلی سماعت 27 اکتوبر کو ہوگی ۔

Oct 25, 2017 11:22 PM IST | Updated on: Oct 25, 2017 11:22 PM IST

نئی دہلی : جواہر لال نہرو یونیورسٹی جے این یو سے لاپتہ طالب علم نجیب احمد کیس کی اگلی سماعت 27 اکتوبر کو ہوگی ۔ اس کیس میں 9 ملزموں کے پالی گراف ٹیسٹ کیلئے سی بی آئی نے انہیں سمن جاری کیا تھا ۔ تاہم اب سبھی ملزموں نے دہلی کورٹ میں پیش ہوکر پالی گراف ٹیسٹ کو منظوری دیدی ہے۔

خیال رہے کہ نجیب کو جے این سے لاپتہ ہوئے ایک سال کا عرصہ گزر چکا ہے ۔ تاہم ابھی تک اس سلسلہ میں تفتیشی ایجنسیوں کو ابھی تک کوئی سراغ نہیں ملا ہے۔ پہلے اس کیس کی دہلی پولیس کی کرائم برانچ تفتیش کررہی تھی ، مگر بعد میں نجیب کے اہل خانہ کے مطالبہ پر دہلی ہائی کورٹ نے اس کیس کو سی بی آئی کو منتقل کردیا ۔

جے این یو طالب علم نجیب احمد گمشدگی کیس : 9 ملزموں کا ہوگا پالی گراف ٹیسٹ ، کچھ نئے انکشاف کا امکان

اترپردیش کے بدایوں کا رہنے والا نجیب احمد جے این یو میں ماہی مانڈوی ہاسٹل کے روم نمبر 106 میں رہتا تھا۔ گزشتہ سال 14 اکتوبر کی رات مبینہ طور پر اے بی وی پی کے کارکنوں کے ساتھ تنازع کے بعد 15 اکتوبر کی صبح سے ہی وہ لاپتہ ہے۔ 14 اکتوبر 2016 کو رات 11 بجے تک اس کو ہاسٹل میں دیکھا گیا تھا ۔ اہل خانہ کی شکایت پر وسنت کنج نارتھ تھانہ پولیس نے اغوا کا معاملہ درج کیا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز