کپل مشرا نے اب کیجریوال حکومت پر 400 کروڑ کی بدعنوانی کا الزام لگایا ، پوچھے یہ 8 سوالات

May 21, 2017 01:42 PM IST | Updated on: May 21, 2017 01:42 PM IST

نئی دہلی: عام آدمی پارٹی سے نکالے گئے ممبر اسمبلی کپل مشرا نے اتوار کو ایک مرتبہ پھر دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجریوال پر سنگین الزامات عائد کئے ۔ کپل مشرا نے کہا کہ اروند کجریوال کی قیادت والی دہلی حکومت نے ہائی سیکورٹی نمبر پلیٹ معاملہ میں 400 کروڑ روپے کا گھوٹالہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم امید کرتے ہیں کہ اروند کیجریوال ان الزامات کا جواب دینے کے لئے خود سامنے آئیں گے، وہ پردے کے پیچھے نہیں رہیں گے۔ کپل مشرا نے کہا کہ وہ عام آدمی پارٹی کے بدعنوان لوگوں کو اقتدار سے ہٹاکر ہی دم لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ اب وقت آ گیا ہے کہ دہلی کی حکومت کو رائٹ ٹو ریکال کے تحت برخاست کردیا جائے۔ کپل مشرا کے مطابق پارٹی کو سنجے سنگھ اور آشوتوش نے ہائی جیک کر لیا ہے۔

کپل مشرا نے کہا کہ وہ عام آدمی پارٹی چھوڑ کر کہیں نہیں جائیں گے۔ وہ پارٹی کے ان لیڈروں کو متحد کر رہے ہیں ، جو پارٹی کو اروند کیجریوال اور بدعنوانی سے پاک بنانا چاہتے ہیں۔ کپل نے عام آدمی پارٹی کے غیر مطمئن کارکنوں کے لئے ایک موبائل نمبر جاری کرتے ہوئے کہا کہ اس کے ذریعہ ہم سے رابطہ کرنے والوں کے ساتھ ایک میٹنگ کر کے رائٹ ٹو ریکال پر بات کی جائے گی۔

کپل مشرا نے اب کیجریوال حکومت پر 400 کروڑ کی بدعنوانی کا الزام لگایا ، پوچھے یہ 8 سوالات

کپل مشرا نے پارٹی سے نکالے جا چکے پرشانت بھوشن اور یوگیندر یادو سے بھی اپیل کی کہ وہ اروند کیجریوال اور پارٹی کے کچھ لیڈروں کی بدعنوانی کو عام کرنے میں مدد کریں۔ انہوں نے کہا کہ 'میں یوگیندر یادو اور پرشانت بھوشن سے معافی مانگتا ہوں، میں نے اروند کیجریوال کے اشارے پر آپ کے بارے میں غیر مناسب زبان کا استعمال کیا۔

ساتھ ہی ساتھ کپل مشرا نے عام آدمی پارٹی حکومت سے 8 سوالات بھی پوچھے

کیا آپ کو شیتل سنگھ کے بارے میں معلومات ہے، جنہوں نے سنجے سنگھ اور آشوتوش کے روس کے سفر کو اسپانسر کیا تھا؟

کیا آپ کو معلوم ہے شیتل پی سنگھ ہائی سیکورٹی رجسٹریشن پلیٹ کی تجارت کرتے ہیں؟

کیا آپ کو معلوم ہے دہلی میں ہائی سیکورٹی نمبر پلیٹ کا 400 کروڑ روپے کا گھوٹالہ ہوا ہے ، جس کی جانچ جاری ہے؟

کیا آپ کو معلوم ہے کہ جن کمپنیوں کے خلاف یہ 400 کروڑ روپے کے گھوٹالہ کی جانچ چل رہی ہے ، ان سے شیتل سنگھ جی کے براہ راست تعلقات رہے ہیں؟

کیا آپ کو یاد ہے 49 دن کی ہماری حکومت نےروسر ماتا ایچ ایس آر پی وینچرس پرائیویٹ لمیٹڈ کے کانٹرکٹ کو منسوخ کرنے کا فیصلہ لیا ؟

کیا آپ کو معلوم ہے کہ دوبارہ حکومت بننے کے بعد ہماری اپنی حکومت کے فیصلہ کو نافذ نہیں کیا گیا، آخر ایسا کیوں؟

کیا آپ کو معلوم ہے کہ ان کمپنیوں میں سے کچھ لوگوں کے تار دنیا کے کئی حوالہ کاروباریوں سے جڑے ہوئے ہیں؟

کیا اب بھی آپ خاموش ہی بیٹھے رہیں گے؟

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز