کشمیر میں سکیورٹی فورسز پر تابڑ توڑ چھ دہشت گردانہ حملے ، ہائی الرٹ جاری

Jun 13, 2017 11:19 PM IST | Updated on: Jun 13, 2017 11:19 PM IST

سری نگر : جموں و کشمیر میں منگل کی شام ایک گھنٹے میں چھ دہشت گردانہ حملے ہوئے ۔ دہشت گردوں نے پلوامہ، پہلگام، اننت ناگ میں سکیورٹی فورسیز کو نشانہ بنایا ۔ دہشت گردوں نے اننت ناگ میں ریٹائرڈ جج کے گھر پر بھی حملہ کیا ۔ یہاں سے بائك سوار دہشت گرد ہتھیار چھین لے گئے ۔ دہشت گردانہ حملوں کے بعد ہائی الرٹ جاری کردیا گیا ہے ۔

پلوامہ میں دو بائك سواروں نے سی آر پی ایف کیمپ پر گرینیڈ پھینکا ۔ گرینیڈ کیمپ کی چاردیواری کے باہر ہی گر گیا اور پھٹ گیا ۔ بائك سواروں نے فائرنگ بھی کی ۔ اس کے بعد وہ فرار ہو گئے ۔ پلوامہ میں ہی ڈی سی آفس پر بھی دہشت گردوں نے حملہ کیا ۔

کشمیر میں سکیورٹی فورسز پر تابڑ توڑ چھ دہشت گردانہ حملے ، ہائی الرٹ جاری

file photo: PTI

ادھراننت ناگ میں حملہ آور چار رائفل چھین کر فرار ہوگئے ۔ دہشت گردوں نے سوپور میں فوج کے کیمپ کو نشانہ بنایا ۔ یہاں پر دہشت گردوں نے 22 قومی رائفلس کے کیمپ پر حملہ کیا ۔ فوج حملے کا جواب دے رہی اور خبر لکھے جانے تک یہاں فائرنگ جاری تھی ۔

دہشت گردوں نے پہلگام کے سرنال میں بھی سی آر پی ایف کیمپ پر گرینیڈ سے حملہ كيا۔ قبل ازیں شام کو ترال میں سی آر پی ایف کیمپ پر دہشت گردوں نے دستی بم پھینکا تھا ۔ اس میں نو جوان زخمی ہو گئے تھے ۔ حزب المجاہدین نے اسے حملے کی ذمہ داری لی ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز