بی جے پی کو اقتدار میں پہنچانا چاہتا ہے الیکشن کمیشن: اروند کیجریوال کا الزام

Apr 10, 2017 02:37 PM IST | Updated on: Apr 10, 2017 02:41 PM IST

نئی دہلی،۔ دہلی کے وزیر اعلی اروند کیجری وال نے الیکٹرانک ووٹنگ مشین (ای وی ایم) میں چھیڑچھاڑ کا سوال ایک بار پھر اٹھاتے ہوئے الیکشن کمیشن پر الزام لگایا کہ وہ بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کو اقتدار میں پہنچانا چاہتا ہے ، اس لئے ای وی ایم میں گڑبڑی کے سلسلے میں کوئی بات نہیں سن رہا ہے۔ مسٹر کیجری وال نے ای وی ایم مشینوں میں مبینہ گڑبڑی کے سلسلے میں اپنے الزام آج پھر دہرائے۔ انہوں نے کہا کہ تینوں کارپوریشنوں کے الیکشن دہلی کی ای وی ایم سے کیوں نہیں کرائے جا رہے۔ اس کیلئے راجستھان سے ای وی ایم کیوں منگائی جا رہی ہیں۔ انہوں نے الیکشن کمیشن پرسخت حملہ کرتے ہوئے کہا ’الیکشن کمیشن ’دھرتراشٹر‘ بن گیا ہے جو اپنے بیٹے ’دریودھن‘ کو ’سام، دام، دنڈ، بھید کرکے اقتدار میں پہنچانا چاہتا ہے۔ واضح رہے کہ اترپردیش اسمبلی الیکشن میں بی جے پی کی زبردست جیت کے بعد بہوجن سماج پارٹی کی سربراہ مایاوتی نے ای وی ایم میں گڑبڑی کے سلسلے میں سوال اٹھائے تھے اور اس کے بعد سے ہی مسٹر کیجری وال اور کئی دیگر اپوزیشن پارٹیاں ای وی ایم کے ساتھ چھیڑچھاڑ کا الزام لگا رہی ہیں۔ حالانکہ الیکشن کمیشن بار بار کہہ رہا ہے کہ ای وی ایم کے ساتھ چھیڑچھاڑ ممکن نہیں ہے۔

مسٹر کیجری وال نے کہا کہ 2006 سے پہلے کی ای وی ایم مشینوں سے الیکشن کیوں کرائے جا رہے ہیں۔ مسٹر کیجری وال کارپوریشنوں کے الیکشن میں ای وی ایم کے بجائے بیلٹ پیپروں سے الیکشن کرانے کا پہلے سے مطالبہ کر چکے ہیں۔

بی جے پی کو اقتدار میں پہنچانا چاہتا ہے الیکشن کمیشن: اروند کیجریوال کا الزام

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز