ای وی ایم میں گڑبڑی ممکن، کارپوریشن کے انتخابات ملتوی کئے جائیں: کیجریوال

Apr 03, 2017 10:32 PM IST | Updated on: Apr 03, 2017 10:32 PM IST

نئی دہلی۔  دہلی کے تینوں کارپوریشنوں کے انتخابات بیلیٹ پیپر کے ذریعے کرانے کا مطالبہ پرقائم وزیر اعلی اروند کیجریوال نے الزام لگایا ہے کہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین کے ساتھ چھیڑ چھاڑ ممکن ہے اوربیلیٹ پیپر کے ذریعے منصفانہ ووٹ ڈالنے کے لیے اسے ملتوی کیا جانا چاہیے۔ تینوں کارپوریشنوں کیلئے پولنگ 23 اپریل کو ہونا ہے اور آج نامزدگی کی آخری تاریخ تھی۔ مسٹر کیجریوال نے نائب وزیر اعلی منیش سسودیا کے ساتھ پریس کانفرنس میں کہا کہ ای وی ایم مشینوں کو 72 گھنٹے کے لیے ہمیں سونپ دینا چاہیے۔ ہمارے پاس ماہر ہیں اور ہم یہ ثابت کر سکتے ہیں کہ مشینوں کی سافٹ ویئر چپ تبدیل کیا جا سکتا ہے اور یہ دھاندلی بڑے پیمانے پر ہوئی ہے۔

مسٹر کیجریوال اترپردیش اسمبلی انتخابات کے نتائج کے بعد کارپوریشنز کے لئے ووٹنگ بیلیٹ پیپر کے ذریعے کرانے کا مطالبہ پہلے بھی کر چکے ہیں۔ حال ہی میں مدھیہ پردیش میں ای وی ایم مشینوں کو لے کر اٹھے تنازعہ کے بعد مسٹر کیجریوال اور دباؤ بنانے کی کوشش میں ہے۔

ای وی ایم میں گڑبڑی ممکن، کارپوریشن کے انتخابات ملتوی کئے جائیں: کیجریوال

اروند کیجریوال: فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز