كلبھوشن معاملہ سے ناراض ہندوستان نے پاکستان سے بند کی ہر طرح کی بات چیت

Apr 15, 2017 11:59 AM IST | Updated on: Apr 15, 2017 11:59 AM IST

نئی دہلی۔ كلبھوشن جادھو کو پاکستان میں پھانسی کی سزا سنائے جانے کے بعد ہندوستان نے پڑوسی ملک سے تمام سطح کی بات چیت روک دی ہے۔ حکومت ہند نے اس معاملے پر سختی دکھاتے ہوئے انڈین کوسٹ گارڈ کے ڈی جی اور پاکستان کے میری ٹائم سیکورٹی ایجنسی کے ساتھ پیر 17 اپریل 2017 کو ہونے والی بات چیت کو ٹال دیا ہے۔ پاکستان میری ٹائم ایجنسی کے ڈی جی ریئر ایڈمرل جمیل اختر 16 اپریل سے 19 اپریل تک نئی دہلی آنے والے تھے تاکہ ہندوستان کے ساتھ ڈی جی سطح کے مذاکرات ہو سکیں۔ سرکاری ذرائع کے مطابق پاکستان کو مذاکرات ملتوی کرنے کی خبر دے دی گئی ہے۔ ابھی تک نئی تاریخ کا بھی اعلان نہیں کیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق، آبی سیکرٹری سطح کے مذاکرات بھی ہندوستان نے ملتوی کر دئیے ہیں۔ پاکستان کی جانب سے مجوزہ تاریخ پر ہندوستان نے اب تک کوئی جواب نہیں دیا ہے۔ پاکستان کی جانب سے اپریل کے آخر تک بات چیت کی تجویز پیش کی گئی تھی۔

كلبھوشن معاملہ سے ناراض ہندوستان نے پاکستان سے بند کی ہر طرح کی بات چیت

غور طلب ہے کہ پاکستان میں قید ہندوستانی شہری كلبھوشن جادھو کو پھانسی کی سزا سنائی گئی ہے۔ پاکستان کے ملٹری کورٹ نے یہ سزا سنائی اور پاکستان نے جاسوسی کے الزام میں انہیں قصوروار ٹھہرایا ہے۔ وہیں، حکومت ہند کے مطابق وہ تاجر ہے۔

 

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز