بہار نے نریندرمودی کو بھگا دیا، اب اترپردیش سے بھی انہیں بھگانا ہے: لالو پرساد یادو

وارانسی۔ راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) صدر اور بہار کے سابق وزیر اعلی لالو پرساد یادو نے وزیر اعظم نریندر مودی پر اتر پردیش کے عوام کو دھوکہ دینے کا الزام لگاتے ہوئے انہیں اسمبلی انتخابات میں ہوشیار رہنے کا مشورہ دیتے ہوئے سماج وادی پارٹی (ایس پی) -كانگریس اتحاد کے امیدواروں کے حق میں ووٹ دینے کی اپیل کی ہے۔

Mar 01, 2017 10:44 AM IST | Updated on: Mar 01, 2017 10:45 AM IST

وارانسی۔ راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) صدر اور بہار کے سابق وزیر اعلی لالو پرساد یادو نے وزیر اعظم نریندر مودی پر اتر پردیش کے عوام کو دھوکہ دینے کا الزام لگاتے ہوئے انہیں اسمبلی انتخابات میں ہوشیار رہنے کا مشورہ دیتے ہوئے سماج وادی پارٹی (ایس پی) -كانگریس اتحاد کے امیدواروں کے حق میں ووٹ دینے کی اپیل کی ہے۔ مسٹر یادو نے کل  وارانسی کے پنڈرا اسمبلی علاقے کے كٹھراو واقع سریو پرساد انٹر کالج میدان میں اتحاد کے امیدوار اجے رائے کے حق میں ایک جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے کہا، "بہار نے مسٹرمودی کو بھگا دیا۔ اب اتر پردیش سے بھی انہیں بھگانا ہے۔ اس کے لئے اس اسمبلی انتخابات میں اتحاد کے امیدوار کے حق میں ووٹ کریں ۔ " انہوں نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات کے وقت  مودی نے 15 دنوں کے اندر بیرون ملک سے کالا دھن لاکر لوگوں کے اکاؤنٹ میں پہنچانے کا وعدہ کیا تھا۔ روپے دینے کا خواب دکھا کر لوگوں سے بینکوں میں اکاؤنٹس بھی کھلوا لیے لیکن آج تک کسی کے پاس کچھ نہیں آیا۔ نوٹ بندي کے بہانے ماں بہنوں کے روپے بھی بینکوں میں جمع کروا لئے اور انہیں قطاروں میں لگا دیا۔

آر جے ڈی سربراہ نے کہا کہ وارانسی کو جاپان کے کیوٹو جیسا شہر بنانے کا خواب دکھایا تھا، لیکن ابھی تک صورت حال میں کوئی تبدیلی نہیں آئی۔ ملک کے پانچ کروڑ نوجوانوں کو روزگار دینے کا وعدہ کیا گیا تھا، لیکن اقتدار میں آتے ہی وہ اپنے کئے وعدوں کو بھول گئے۔

بہار نے نریندرمودی کو بھگا دیا، اب اترپردیش سے بھی انہیں بھگانا ہے: لالو پرساد یادو

انہوں نے کہا کہ لوک سبھا انتخابات کے وقت ملک نریندر مودی کو سمجھ نہیں پایا اور انہیں وزیر اعظم بنا دیا۔ لوگ اب ان کو سمجھنے لگے ہیں کہ مسٹر مودی وہی لیڈر ہیں جن کے وزیر اعلی رہتے گجرات میں فسادات ہوئے اور سماجی بھائی چارہ ختم کرنے کی مکروہ کوشش کی گئی تھی۔

لالو یادو نے سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کو سازش کے تحت بیمار کرنے کے خدشہ کا اظہار کرتے ہوئے مرکزی تفتیشی بیورو (سی بی آئی) سے جانچ کرانے کا ایک بار پھر مطالبہ کیا ۔ انہوں نے خدشہ ظاہر کیا کہ کسی نے مسٹر واجپئی کو کوئی ایسی چیز پلا دی ہے، جس سے ان کا دماغ کام نہیں کر رہا ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز