LIVE NOW

کٹھوعہ ریپ اور قتل کیس لائیو:معاملے پر اگلی سماعت 28 اپریل کو ہوگی،نابالغ ملزم نے کی ضمانت کی مانگ

کٹھوعہ ریپ قتل معاملے میں پیر سے ضلع اور سیشن کورٹ میں کچھ ہی دیر میں سماعت شروع ہونے والی ہے۔۔ملزموں کو جموں پولیس ضلع کورٹ لیکر پہنچ گئی ہے۔

Urdu.news18.com | April 16, 2018, 6:34 PM IST
facebook Twitter google Linkedin
Last Updated April 16, 2018
auto-refresh

Highlights

کٹھوعہ ریپ اور قتل کیس میں ضلع اور سیشن کورٹ نے کہا ہے کہ چارج شیٹ کی کاپی سبھی ملزموں کو دی جائے۔اس معاملے کی اگلی سماعت 28 اپریل کو ہوگی۔اس درمیان متاثرہ کے اہل خانہ سپریم کورٹ پہنچے۔ان کا مطالبہ ہے کہ اس کیس کی سماعت کٹھوعہ کے جیف جسٹس مجسٹریٹ کورٹ میں نہ ہوبلکہ اس کی سنوائی چنڈی گڑھ میں کرائی جائے۔معاملے کی سماعت دوپہر 2 بجے ہوگی۔ اس معاملے میں 8 لوگوں کو ملزم بنایا گیا ہے۔ملزموں میں ایک نابالغ بھی شامل ہے ۔جس کی پیشی 24 اپریل کو طے ہوئی ہےاس کیس کے ملزم ہیں سانجھی رام،دیپک کھجوریا،سریندر ورما،وشال جنگوترا،تلک راج،آنند دتہ اور پرویش کمار،۔انہیں ضلع اور سیشن کورٹ کے سامنے پیش کیا جائیگا۔ کیا ہے پورا معاملہ؟ جموں۔کشمیر کے کٹھوعہ ضلع میں 8 سال کی بچی کے ساتھ اجتماعی عصمت دری اور قتل کے معاملے کو لیکر ملک بھر میں غصہ ہے۔جموں۔کشمیر پولیس کی کرائم برانچ نے پیر کو چیف جسٹس مجسٹریٹ کی عدالت میں 15 صفحات کی چارج شیٹ داخل کی ہے۔اس میں بکروال کمیونٹی کی بچی کے اغوا ،ریپ،اور اس کے قتل کو لیکر رونگٹے کھڑے کر دینے والے خلاصے ہوئے ہیں۔الزام ہے کہ 8 سال کی معصوم بچی کو جنوری میں ایک ہفتے تک کٹھوعہ ضلع کے ایک گاؤں کے مندر میں یرغمال بناکر رکھا گیاتھا اور اسے نشیلی اشیا دیکر اس کے ساتھ بار ۔بار ریپ کیا گیا اور بعد میں اس کا قتل کر دیا گیا تھا۔ تازہ جانکاری کیلئے ہمارے ساتھ بنے رہیں۔۔۔
Load More