ہم شہادت کو فرقہ وارانہ رنگ نہیں دیتے ، ایسا بیان دینے والے فوج کو صحیح طریقہ سے نہیں جانتے : فوج

ہندوستانی فوج کی شمالی کمان کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل دیو راج انبو نے کہا ہے کہ ہم شہادت کو فرقہ وارانہ رنگ نہیں دیتے ہیں ۔ انہوں نے کسی کا نام لئے بغیر کہا کہ ایسے بیانات دینے والے لوگ فوج کو صحیح طریقہ سے نہیں جانتے ہیں۔

Feb 14, 2018 04:41 PM IST | Updated on: Feb 14, 2018 05:24 PM IST

 ہندوستانی فوج کی شمالی کمان کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل دیو راج انبو نے کہا ہے کہ ہم شہادت کو فرقہ وارانہ رنگ نہیں دیتے ہیں ۔ انہوں نے کسی کا نام لئے بغیر کہا کہ ایسے بیانات دینے والے لوگ فوج کو صحیح طریقہ سے نہیں جانتے ہیں۔ خیال رہے کہ جموں کے سنجوان میں فوجی کیمپ پر دہشت گردانہ حملہ میں شہید جوانوں کے مذہب کو لےکر مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اسد الدین اویسی نے ایک بیان دیا تھا ، جس میں انہوں نے کہا تھا کہ دہشت گردانہ حملہ میں شہید ہوئے سات میں سے پانچ مسلمان تھے ، لیکن پھر بھی فرضی راشٹر وادی لوگ مسلمانوں کی حب الوطنی پر سوال کرتے ہیں۔

لیفٹیننٹ جنرل نے سنجوان فوجی کیمپ سمیت حالیہ دہشت گردانہ حملوں پر اپنا رد عمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ دشمن مایوس ہیں ، جب وہ سرحد پر ناکام ہوتے ہیں تو فوج کے کیمپوں پر حملہ کرتے ہیں۔

ہم شہادت کو فرقہ وارانہ رنگ نہیں دیتے ، ایسا بیان دینے والے فوج کو صحیح طریقہ سے نہیں جانتے : فوج

 ہندوستانی فوج کی شمالی کمان کے کمانڈر لیفٹیننٹ جنرل دیو راج انبو۔ فوٹو : اے این آئی ۔

نوجوانوں کے دہشت گرد تنظیموں سے وابستہ ہونےپر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے لیفٹیننٹ جنرل دیو راج انبو نے کہا کہ ہاں نوجوانوں کا دہشت گردی کی صف میں شامل ہونا تشویش کا موضوع ہے ، 2017 میں ہماری توجہ دہشت گردی کے سرغناوں کے خاتمہ پر تھی ، اب ہمیں اس پر بھی توجہ دینی ہوگی۔ لیفٹیننٹ جنرل نے اس کیلئے سوشل میڈیا کو بھی ذمہ دار قرار دیا ۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردانہ واقعات میں اضافہ کیلئے سوشل میڈیا بھی ذمہ دار ہے ، یہ بڑے پیمانے پرنوجوانوں کو راغب کررہا ہے اور مجھے لگتا ہے کہ ہمیں اس مسئلہ پر بھی اب دھیان دینے کی ضرورت ہے۔

فوج کی شمالی کمان کے کمانڈر انبونے کہا کہ حزب المجاہدین ، جیش محمد اور لشکر طیبہ یہ تینوں دہشت گردتنظیمیں ایک دوسرے سے جڑی ہوئی ہیں ، ان میں کوئی فرق نہیں ہے ، وہ ایک تنظیم سے دوسری میں جاتے رہتے ہیں ، لیکن ملک کے خلاف ہتھیار اٹھانے والے سبھی دہشت گرد ہیں اور ہم اس کے ساتھ سختی سے نمٹیں گے۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز