لکھنؤ کے اموسی ایئرپورٹ کا ریڈار ہوا فیل، طیاروں کا آپریشن مکمل طور پر ٹھپ

Jan 14, 2017 08:43 PM IST | Updated on: Jan 14, 2017 08:43 PM IST

نئی دہلی۔  لکھنؤ ہوائی اڈے پر تکنیکی خرابی کی وجہ سے آج شام سے طیاروں کی نقل و حرکت مکمل طور پر ٹھپ ہو گئی ہے۔ ہوائی اڈے پر ويور سسٹم خراب ہونے کی وجہ سے شام پانچ بجے کے بعد سے نہ تو کوئی طیارہ لینڈ کر سکا ہے اور نہ ہی پرواز کر سکا ہے۔ ہوائی اڈہ کے ڈائریکٹر وي پي شریواستو نے فون پر یو این آئی کو بتایا کہ انجینئرنگ ٹیم خرابی ٹھیک کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔ یہ پوچھے جانے پر کہ ہوائی اڈے پر طیاروں کی نقل و حرکت کب سے شروع ہوپائے گی، انہوں نے کوئی مقررہ وقت بتانے سے عاجزی ظاہر کی۔

انہوں نے بتایا کہ شام 4.30 بجے تکنیکی خرابی کا پتہ چلا اور شام پانچ بجے تک ہوائی اڈے پر طیاروں کا آپریشن معمول کے مطابق ہوا۔ شام 4.51 بجے آخری طیارے کو ہینڈل کیا گیا۔ دریں اثناء، دہلی سمیت ملک کے دوسرے ہوائی اڈوں سے لکھنؤ جانے والی تمام پروازیں فی الحال منسوخ کر دی گئی ہیں۔

لکھنؤ کے اموسی ایئرپورٹ کا ریڈار ہوا فیل، طیاروں کا آپریشن مکمل طور پر ٹھپ

گیٹی امیجیز

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز