یوم آزادی پر پرچم نہ لہرانے والے اترپردیش کے مدارس پر ہوگی کارروائی

کمشنر نے کہا، 'اگر کسی مدرسے کے بارے میں ایسی شکایت ملی کہ اس نے حکومت کا حکم نہ مانتے ہوئے پرچم نہیں لہرایا ہو گا اور قومی ترانہ نہیں گایا ہوگا تو اس کی جانچ ہوگی اور جو مجرم ہو گا اس کے خلاف قانون کے دائرے میں کارروائی ہوگی۔

Aug 17, 2017 07:05 PM IST | Updated on: Aug 17, 2017 07:05 PM IST

بریلی۔ ضلع کے مدارس میں پرچم لہرائے جانے اور قومی ترانہ گائے جانے کے مقامی انتظامیہ کے دعووں کے درمیان بریلی کے کمشنر پی وی جگموہن نے جمعرات کو کہا کہ یوم آزادی کے دن پرچم لہرائے جانے کے حکم کو جس نے نہیں مانا ہو گا اس کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی اور ان پر قومی سلامتی ایکٹ (این ایس اے) بھی لگایا جا سکتا ہے۔ کمشنر نے کہا، 'اگر کسی مدرسے کے بارے میں ایسی شکایت ملی کہ اس نے حکومت کا حکم نہ مانتے ہوئے پرچم نہیں لہرایا ہو گا اور قومی ترانہ نہیں گایا ہوگا تو اس کی جانچ ہوگی اور جو مجرم ہو گا اس کے خلاف قانون کے دائرے میں کارروائی ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ اقلیتی بہبود محکمہ کے حکام کو کہا گیا ہے کہ وہ فوری طور پر ان مدارس کی فہرست سونپے جہاں قومی ترانہ نہیں گایا گیا۔ اس معاملہ میں اگر عوام کی طرف سے کوئی شکایت ملی تو اس کی بھی تحقیقات کی جائے گی۔

یوم آزادی پر پرچم نہ لہرانے والے اترپردیش کے مدارس پر ہوگی کارروائی

اترپردیش کے وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ: فائل فوٹو

انتظامیہ کا دعوی ہے کہ شہر قاضی کے مدرسے کے علاوہ تمام مدارس نے حکومت کے حکم کو مانا، لیکن غیر مصدقہ خبروں کے مطابق کچھ مدرسوں میں قومی ترانہ کی بجائے 'سارے جہاں سے اچھا ہندوستان ہمارا' گایا گیا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز