پتھر بازی معاملہ پر محبوبہ کی مودی سے ملاقات، کہا واجپئی پالیسی سے ہوگا کشمیر میں امن

Apr 24, 2017 11:56 AM IST | Updated on: Apr 24, 2017 12:06 PM IST

نئی دہلی۔ جموں و کشمیر کی سی ایم محبوبہ مفتی نے وادی میں جاری تشدد اور پتھر بازی جیسے واقعات پر پیر کو نئی دہلی میں وزیر اعظم نریندر مودی سے بات چیت کی۔ محبوبہ نے اس بات چیت کے بعد کہا کہ پتھر بازی اور فائرنگ کے درمیان بات چیت ممکن نہیں ہے۔ محبوبہ نے یہ بھی کہا کہ کشمیر میں امن صرف سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپئی کی پالیسیوں پر چل کر ہی آ سکتا ہے۔ محبوبہ کچھ ہی دیر میں وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ سے بھی ملاقات کرنے والی ہیں۔

محبوبہ نے وادی میں جاری پتھر بازی کے واقعات پر کہا کہ ایسا کرنے والے کچھ نوجوان ہیں جو غصے میں ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ان نوجوانوں کو اکسایا جا رہا ہے۔ محبوبہ نے بتایا کہ اس میٹنگ میں کشمیر کے حالات اور قانون و انتظام پر بھی تبادلہ خیال کیا گیا۔ اس کے علاوہ اتحاد پر بھی بات چیت ہوئی۔

پتھر بازی معاملہ پر محبوبہ کی مودی سے ملاقات، کہا واجپئی پالیسی سے ہوگا کشمیر میں امن

محبوبہ نے بتایا کہ اس بات چیت میں سندھ آبی معاہدہ اور ضمنی انتخابات کے دوران ہوئی کم ووٹنگ پر بھی چرچا کی گئی ہے۔ محبوبہ نے بتایا کہ انہوں نے وزیر اعظم پر دباؤ ڈالا کہ پانی کے مسئلہ پر توجہ دیں۔ محبوبہ نے کہا کہ ایسے حالات سے ہمیں نقصان ہو رہا ہے۔ ایک طرف سے پتھر چلتے ہیں دوسری جانب سے گولیاں، اس سے نوجوان مایوس ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز