شوشل میڈیا اور دنیا وی وسائل میں وقت کا ضیاع اور اس کا بیجا استعمال مسلم نوجوانوں کے لئے سم قاتل : مولانا محمد رحمانی مدنی

Jan 12, 2018 07:28 PM IST | Updated on: Jan 12, 2018 07:28 PM IST

نئی دہلی : تنہائی میں گناہوں کو انجام دینے والے لوگوں کی نگاہوں سے تو بچ جاتے ہیں ،لیکن اللہ تعالی انہیں دیکھ رہا ہے، یہ لوگ راتوں میں آپس میں وہ گفتگو کرتے ہیں جسے اللہ رب العالمین ناپسند کرتا ہے اور اللہ ہر چیز سے واقف ہے۔اللہ ہم سے غیب میں اللہ کی خشیت اور تقوی اختیار کرنے کا حکم دیتا ہے اور ہمیں ظلم وجور اور سیاہ کاریوں سے دور رہنے کی تلقین کرتاہے کیوں کہ تنہائی میں گناہوں کو انجام دینا اور دنیا کے سامنے شرافت کا اظہار کرنا اللہ کے عذاب کو دعوت دیتا ہے۔

اللہ رب العالمین نے ہمیں اسلام کے مطابق زندگی گزارنے اور سچا مسلمان بننے کا حکم دیا ہے، نیز ہم سے وقت کے صحیح استعمال اور اپنے تمام اعضاء وجوارح کے صحیح استعمال کا مطالبہ کیا ہے کیونکہ آخرت میں زبانیں گنگ ہوجائیں گی اور اعضاء وجوارح برائیوں کی گواہی دیں گے۔لیکن بدقسمتی یہ ہے ہم نے اسلامی تعلیمات کی ساری حدیں پار کردیں اور اسلامی تعلیمات کا مذاق بنا ڈالا، حلال وحرام کی تمیز چھوڑدی، ہماری خواتین بے پردہ ہوگئیں، ہم نے جھوٹ اور دھوکہ کو اپنا وطیرہ بنا لیا، لوگوں کے ساتھ غلط سلوک، بے راہ روی اور سیاہ کاریوں کو اپنانا ہماری عادت بن گئی، اس کے باوجود ہم جب پریشان ہوتے ہیں تو اللہ سے مدد کی توقع کرتے ہیں ۔

شوشل میڈیا اور دنیا وی وسائل میں وقت کا ضیاع اور اس کا بیجا استعمال مسلم نوجوانوں کے لئے سم قاتل : مولانا محمد رحمانی مدنی

مولانا محمد رحمانی مدنی: فائل فوٹو۔

ان خیالات کا اظہار ابوالکلام آزاد اسلامک اویکننگ سنٹر نئی دہلی کے صدر مولانا محمد رحمانی سنابلی مدنی نے سنٹر کی جامع مسجد ابوبکر صدیق، جوگابائی میں خطبۂ جمعہ کے دوران کیا۔مولانا نے دنیا کی حقیقت اور مسلم نوجوانوں کا اس میں مگن ہوکر آخرت سے غافل ہوجانا کے موضوع پر تقریر کررہے تھے۔مولانا نے کہا کہ دنیا دھوکہ کا سودا اور آخرت کی کھیتی ہے، یہاں ہمیں چند دنوں تک رہنا ہے، اصل اور ہمیشگی کی زندگی آخرت کی زندگی ہے، اس وجہ سے ہمیں اس کے لئے تیاری کرنی چاہئے اور قرآن وسنت پر بھرپور عمل کرکے سچا مسلمان بننا چاہئے۔

مولانا نے کہا کہ آج نئی نسلیں بالخصوص مسلم نوجوان اپنی عمر کا اکثر حصہ فضول چیزوں میں برباد رکردیتا ہے۔غیر ضروری چیزوں کے استعمال کے لئے شوشل میڈیا کا استعمال ہمارا مشغلہ بن گیا ہے اور ہم اپنے قیمتی اوقات کو ان فضولیات میں برباد رکررہے ہیں جبکہ ان کا بے جااستعمال شرعا حرام ہے، یہی وجہ ہے کہ ہم تعلیمی میدان میں بھی پیچھے نظر آتے ہیں اور اخلاقیات میں بھی ۔ ہمیں اللہ تعالی کا خوف اختیار کرنا چاہئے اور اس کے عذاب سے چوکنا رہنا چاہئے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز