ہاتھرس میں میٹ کی دکانوں میں لگائی آگ، حکومت پر برسے دکاندار

Mar 22, 2017 03:52 PM IST | Updated on: Mar 22, 2017 03:52 PM IST

نئی دہلی۔ اترپردیش کے ہاتھرس ضلع میں میٹ کی تین دکانوں میں نامعلوم لوگوں نے آگ لگا دی۔ آگ سے پوری دکانیں جل کر خاک ہو گئیں۔ اطلاع پر موقع پر پہنچی پولیس واقعہ کی تحقیقات کر رہی ہے۔ ہاتھرس کے کوتوالی صدر علاقے کے كاشی رام کالونی کے پاس دیر رات کچھ نامعلوم افراد نے میٹ کی 3 دکانوں میں آگ لگا دی۔ دکان کے مالکان کو صبح جب اس معاملے کی اطلاع ملی تو انہوں نے پولیس کو مطلع کیا۔

دکان کے مالک شکیل نے حکومت پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا 'جب سے یہ حکومت بنی ہے تب سے ہمارا نقصان ہو رہا ہے۔ یہ دکان ہی ہماری روزی روٹی تھی۔ تینوں دکانوں کو جلا دیا اب ہم کہاں جائیں۔ اب ہم کوئی کام بھی نہیں کر پائیں گے کیونکہ ہم گوشت کی دکان کے علاوہ کچھ اور نہیں کر سکتے۔ '

ہاتھرس میں میٹ کی دکانوں میں لگائی آگ، حکومت پر برسے دکاندار

علامتی تصویر

ہاتھرس کے ایس پی دلیپ کمار نے کہا کہ 'جلیشر روڈ پر میٹ کی دوکانیں تھی، جن میں دیر رات میں آگ لگ گئی جس کی اطلاع پر پولیس پہنچی اور آگ کو بجھا دیا گیا۔ آگ کی وجہ کیا ہے اس کی ہم جانچ کر رہے ہیں اور جلد ہی پتہ لگا لیں گے۔ ایک دکان کے مالک سندھی نے کہا - 'ہماری میٹ کی دکان تھی اسے جلا دیا۔ چھوٹی سی دکان تھی اسی سے ہم اپنا گھر کا خرچ چلاتے تھے۔ 10 سال سے دکان ہے پہلے ایسا کبھی نہیں ہوا۔ یہ نئی حکومت جب سے آئی ہے تب سے یہ ہو رہا ہے ہمارے ساتھ ظلم ہو رہا ہے۔

وہیں ایک دکان کے مالک رئیس نے کہا - 'ہم گھر پر تھے تبھی رات کو 2 بجے پتہ چلا کہ ہماری دکان میں آگ لگ گئی ہے۔ ہم یہاں پر آئے تو دکان جل چکی تھی۔'

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز