دفعہ 35 اے کے خلاف سازش کا مقصد مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنا : میرواعظ عمر فاروق

Aug 11, 2017 06:12 PM IST | Updated on: Aug 11, 2017 06:12 PM IST

سری نگر: حریت کانفرنس (ع) کے چیئرمین میرواعظ مولوی عمر فاروق نے کہا کہ کشمیر کی مقامی سیاسی جماعتیں آئین کی دفعہ 35 اے کا دفاع کرنے میں ناکام ہوئیں تو اہلیان وادی سڑکوں پر نکل کر احتجاج کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ میں اس دفعہ کو چیلنج کرنے کا مقصد ریاست کی خصوصی پوزیشن میں تبدیلی لا کر یہاں پر غیر ریاستی باشندوں کو مستقل طور بساکر یہاں آبادی کے تناسب کو مستقل طور تبدیل کرنا ہے۔

میرواعظ جنہیں گذشتہ قریب دو مہینوں سے مسلسل اپنے گھر میں نظر بند رکھا گیا ہے، نے جمعہ کو یہاں جاری اپنے ایک بیان میں کہا کہ ریاست میں جی ایس ٹی کے نفاذ جس کے ذریعے یہاں کی مالی خود اختیاری کو ختم کیا گیا ، کے بعد بی جے پی اور آر ایس ایس آئین کی دفعہ 35 اے کو سپریم کورٹ کے ذریعے ختم کراناچاہتی ہیں۔

دفعہ 35 اے کے خلاف سازش کا مقصد مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنا : میرواعظ عمر فاروق

file photo

انہوں نے کہا کہ مذکورہ دفعہ کے تحت کوئی بھی غیر ریاستی باشندہ ریاست کا مستقل باشندہ بننے ، یہاں غیر منقولہ جائیداد جیسے زمین مکان وغیرہ خریدنے ، یہاں سرکاری نوکری پانے یا یہاں کی اسمبلی کے لئے ووٹ دینے کا حقدار نہیں ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز