این جی او ہے مسلم پرسنل لا بورڈ، نجی مفاد میں کر رہا تین طلاق کی مخالفت: محسن رضا

محسن رضا نے پرسنل لا بورڈ کو ایک غیر سرکاری تنظیم قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے ذاتی مفاد میں ہی تین طلاق کی مخالفت کر رہا ہے۔

Dec 29, 2017 11:05 AM IST | Updated on: Dec 29, 2017 11:05 AM IST

لکھنئو۔ آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ تین طلاق بل کے خلاف اپنا احتجاج جتا چکا ہے۔ اس سلسلے میں اتر پردیش حکومت میں وزیر مملکت محسن رضا نے بورڈ پر کئی الزامات لگائے ہیں۔

محسن رضا نے پرسنل لا بورڈ کو ایک غیر سرکاری تنظیم قرار دیتے ہوئے کہا کہ وہ اپنے ذاتی مفاد میں ہی تین طلاق کی مخالفت کر رہا ہے۔ محسن رضا نے کہا کہ کل کا دن تاریخی ہے۔ یہ خواتین کے لئے فخر اور احترام کا معاملہ ہے۔ محسن رضا نے کہا کہ مجھے آج بھی وہ دن یاد ہے جب مسلم پرسنل لا بورڈ نے 1986 میں شاہ بانو کیس میں دباؤ بنایا تھا۔

این جی او ہے مسلم پرسنل لا بورڈ، نجی مفاد میں کر رہا تین طلاق کی مخالفت: محسن رضا

اتر پردیش حکومت میں وزیر مملکت محسن رضا

اس وقت مسلم ووٹ بینک کی سیاست کرتے ہوئے کانگریس نے سپریم کورٹ کے فیصلہ کو پارلیمنٹ میں پلٹ دیا تھا۔ اس فیصلے کے بعد 30 سال تک مسلم خواتین کو جو جھیلنا پڑا اس کے لئے براہ راست طور پر کانگریس اور مسلم پرسنل لا بورڈ قصوروار ہیں۔

محسن رضا نے کہا کہ انہیں اختیار کس نے دیا ہے کہ یہ بار بار ضابطہ، قانون اور شریعت کے معاملات میں مداخلت کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ملک میں لاکھوں این جی اوز ہیں، ان میں سے ایک مسلم پرسنل لا بورڈ بھی ہے۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز