اگر کوئی ممبر پارلیمنٹ منفعت بخش عہدہ پر ہے تو اس کو نااہل قرار دیا جانا چاہئے، پارلیمانی کمیٹی نے کی سفارش

منفعت بخش عہدہ سے متعلق پارلیمانی کمیٹی نے ان ممبران پارلیمنٹ کو نااہل قرار دینے کی سفارش کی ہے جو صارفین کے حقوق کے تحفظ کے لئے کنزیومر کونسل کے رکن بھی ہیں۔

Aug 20, 2017 06:14 PM IST | Updated on: Aug 20, 2017 06:14 PM IST

نئی دہلی: منفعت بخش عہدہ سے متعلق پارلیمانی کمیٹی نے ان ممبران پارلیمنٹ کو نااہل قرار دینے کی سفارش کی ہے جو صارفین کے حقوق کے تحفظ کے لئے کنزیومر کونسل کے رکن بھی ہیں۔ کمیٹی نے اپنی رپورٹ میں کہا ہے کہ پارلیمنٹ (انسداد نااہلی) ایکٹ 1959 کی دفعہ 2 (اے) کے تحت اگر کوئی ممبر پارلیمنٹ منفعت بخش عہدہ پر ہے تو اسے پارلیمنٹ کی رکنیت سے نااہل قرار دیا جانا چاہئے۔

کمیٹی کا یہ بھی کہنا ہے کہ صارفین کے حقوق کے تحفظ کے لئے کنزیومر کونسل کے اراکین کو میٹنگ میں شرکت کرنے کیلئے ہر میٹنگ کے حساب سے پانچ ہزار روپئے ملتے ہیں، اس لئے یہ منفعت بخش عہدہ ہے۔ اگر انہیں نااہل نہیں قرار دیا جاتا تو بہتر ہے کہ کونسل کو پارلیمنٹ (انسداد نااہلی) ایکٹ 1959 کے دائرے سے ہی باہر کردیا جائے۔ اس قانون کے دائرے سے جس کو باہر رکھا گیا ہے اس میں کونسل شامل نہیں ہے۔

اگر کوئی ممبر پارلیمنٹ منفعت بخش عہدہ پر ہے تو اس کو نااہل قرار دیا جانا چاہئے، پارلیمانی کمیٹی نے کی سفارش

پارلیمنٹ: فائل فوٹو

واضح رہے کہ کونسل کے اراکین کی معیاد کار تین برسوں کی ہوتی ہے اور اس کا اختیار صرف مشیر کے طور پر ہوتا ہے۔ اسے کوئی مقننہ یا انتظامیہ کا اختیار نہیں ہے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز