مدرسہ اسلامیہ عربیہ بیت العلوم کے شیخ الحدیث مفتی عبد اللہ پھولپوری کی رحلت بڑا علمی نقصان : مفتی محفوظ الرحمان عثمانی

عالمی شہرت یافتہ عالم دین اورمدرسہ اسلامیہ عربیہ بیت العلوم سرائے میر اعظم گڑھ کے ناظم اعلیٰ و شیخ الحدیث مفتی عبد اللہ پھولپوری خلیفہ ومجاز حضرت مولانا شاہ ابرارالحق ہردوئی کے مکہ مکرمہ میں اچانک انتقال پرملال کو دینی اور علمی نقصان قرار دیا ہے

Nov 30, 2017 11:51 PM IST | Updated on: Nov 30, 2017 11:51 PM IST

نئی دہلی: عالمی شہرت یافتہ عالم دین اورمدرسہ اسلامیہ عربیہ بیت العلوم سرائے میر اعظم گڑھ کے ناظم اعلیٰ و شیخ الحدیث مفتی عبد اللہ پھولپوری خلیفہ ومجاز حضرت مولانا شاہ ابرارالحق ہردوئی کے مکہ مکرمہ میں اچانک انتقال پرملال کو دینی اور علمی نقصان قراردیتے ہوئے معروف عالم دین وممتاز ملی رہنما حضرت مولانا مفتی محفوظ الرحمن عثمانی بانی و مہتمم جامعۃ القاسم دارالعلوم الاسلامیہ سپول بہار نے کہاکہ یہ سال صدموں سے بھراسال ہے۔ انہوں نے کہاکہ جامعہ مظاہر علوم سہارنپورمیں مفتی عبد اللہ صاحب ہمارے سینئر تھے،اس لیے ان کی پوری زندگی میرے سامنے کھلی کتا ب کی طرح ہے۔علم و عمل اور زہد و تقویٰ میں وہ ہندوستان میں اس خاندان کے سچےجانشیں جن کی دینی،اصلاحی اور دعوتی خدمات کا دائرہ کافی وسیع اورپوری دنیا میں پھیلا ہوا ہے۔آپ حضرت مولانا شاہ عبدالغنی پھولپوریؒ (خلیفہ حکیم الامت مولانا اشرف علی تھانوی علیہ الرحمہ پوری) کے پوتے تھے۔

انہوں نے کہاکہ بہت کم وقت میں مفتی عبد اللہ پھولپوری نے اپنے بزرگوں کے نقش قدم چلتے ہوئے بڑے عظیم کارنامے انجام دیے اورآخری سانس تک یہ خدمت ان کے مقدر تھی۔اپنے مدرسہ اسلامیہ عربیہ بیت العلوم میں کئی انقلابی اقدام کی وجہ سے مدرسہ کو شہرت کی بلندیوں پر پہنچا دیا۔یقینا یہ وہ کارنامے اورعلمی خدمات ہیںجنہیں کبھی فراموش نہیں کیا جا سکتا۔

مدرسہ اسلامیہ عربیہ بیت العلوم کے شیخ الحدیث مفتی عبد اللہ پھولپوری کی رحلت بڑا علمی نقصان : مفتی محفوظ الرحمان عثمانی

مفتی عثمانی نے مرحوم کے صاحبزادے مفتی اجوداللہ پھولپوری سے فو ن پر تعزیت پیش کرتے ہوئے اپنے روابط اور ان کی علمی خدمات کا ذکر کیااور دیگر پسماندگان سے بھی اظہار تعزیت پیش کی۔انہوں نے کہاکہ مرحوم بہترین مقرر اور مصلح تھے ،ان کو دیکھ کر اسلاف کی یاد تازہ ہو جاتی تھی،ایسی شخصیت کا سانحہ ارتحال پوری علمی دنیا ناقبال تلافی نقصان ہے، دُعا کی کہ اﷲ تعالیٰ مرحوم کو جواررحمت میں جگہ دے اور پسماندگان کو یہ صدمہ وصبر و استقامت سے برداشت کرنے کی توفیق عطا فرمائے۔

سوشل میڈیا کے توسط سے حضرت مفتی صاحب کے انتقال کی جانکاہ اطلاع ملتے ہی جامعۃ القاسم دارالعلوم الاسلامیہ میں ایصال و ثواب کے لئے ’دعائیہ مجلس کا اہتما کیا گیا جس میں اساتذہ اور طلبہ نے قرآن پاک کی تلاوت اورآپ کے بلندیہ درجات کے لئے دعائیں کی گئیں۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز