ملائم سنگھ نے وزیر اعظم مودی کے تئیں ایک بار پھر دکھائی بڑی ہی گرمجوشی

Jul 17, 2017 03:38 PM IST | Updated on: Jul 17, 2017 03:38 PM IST

نئی دہلی۔ پارلیمنٹ کے مانسون اجلاس میں چین کے ساتھ تنازعہ، جموں و کشمیر میں سرحد پر پاک فائرنگ اور گؤ رکشا کے نام پر ہو رہے تشدد کے سلسلے میں اپوزیشن کی جانب سے حکومت کو گھیرنے کی حکمت عملی کے دوران اجلاس سے قبل آج لوک سبھا میں سماج وادی پارٹی کے سربراہ ملائم سنگھ یادو نے وزیر اعظم نریندر مودی کا نہایت ہی خندہ پیشانی کے ساتھ خیرمقدم کیا۔ صبح ایوان کی کارروائی شروع ہونے سے قبل مسٹر مودی جیسے ہی ایوان میں پہنچے ہمیشہ کی طرح اگلی قطار میں بیٹھے حزب اقتدار اور حزب اختلاف کے اراکین نے ہاتھ جوڑ کر ان کا خیرمقدم کیا۔ مسٹر مودی جیسے ہی کانگریس صدر سونیا گاندھی کا خیرمقدم کرنے کے بعد آگے بڑھے ان کے بازو میں بیٹھے مسٹر یادو نے بڑی ہی گرم جوشی سے وزیر اعظم کا ہاتھ تھام لیا اور تقریباً پانچ منٹ تک اسی حالت میں کھڑے ان سے باتیں کرتے رہے اور ان کی کان میں بھی دھیمی آواز میں کچھ کہا۔

وزیر اعظم کے لئے مسٹر یادو کی اس گرم جوشی کے مظاہرے سے محترمہ گاندھی تھوڑی بے چین نظر آئیں لیکن مسکراتے ہوئے خاموش کھڑی رہیں۔ اس سے قبل مسٹر یادو قومی جمہوری اتحاد کے امیدوار رام ناتھ کووند کو حمایت دینے کا اعلان بھی کر چکے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ صدر کا الیکشن عام رضامندی سے ہونا چاہئے، رام ناتھ جی کی جیت طےہے۔ اس میں ہمیں اپنے ضمیر کی آواز پر ووٹ دینا چاہئے ۔ بہت سارے لوگوں کو رام ناتھ جی کے حق میں ہی ووٹ دینا چاہئے۔

ملائم سنگھ نے وزیر اعظم مودی کے تئیں ایک بار پھر دکھائی بڑی ہی گرمجوشی

نریندر مودی، ملائم سنگھ: فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز