ملائم سنگھ کا بڑا اعلان : نہیں بنارہا کوئی نئی پارٹی ، تاہم بیٹے کو لے کر باپ کا چھلکا درد ، کہی یہ تلخ بات

Sep 25, 2017 12:38 PM IST | Updated on: Sep 25, 2017 12:38 PM IST

لکھنو : تمام تر قیاس آرائیوں پر روک لگاتے ہوئے ملائم سنگھ یادو نے واضح کردیا ہے کہ ہے کہ وہ فی الحال کوئی نئی پارٹی بنانے نہیں جارہے ہیں ۔ لکھنو میں ایک پریس کانفرنس کرکے انہوں نے اپنا موقف واضح کیا۔ پریس کانفرنس کے دوران انہوں نے مرکز کی مودی حکومت اور یاست کی یوگی حکومت پر بھی جم کر نشانہ سادھا۔ خیال رہے کہ کچھ دنوں سے قیاس آرائی کا بازار گرم تھا کہ ملائم سنگھ یادو اور شیوپال سنگھ جلد ہی نئی پارٹی کی تشکیل کا اعلان کرسکتے ہیں۔ تاہم آج انہوں نے سبھی قیاس آرائیوں کو خارج کردیا۔

پریس کانفرنس کے دوران ملائم سنگھ یادو نے کہا کہ مرکز کی مودی حکومت نے تین سالوں میں ایک بھی وعدہ پورا نہیں کیا ہے۔ مودی سرکار کی نوٹ بندی نے لوگوں کی کمر توڑ کر رکھدی ہے۔ یوگی حکومت پر نشانہ سادھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اترپردیش میں قانون کا راج ختم ہوگیا ہے۔ بی ایچ یو میں طالبات تک محفوظ نہیں ہیں۔ یوگی حکومت کے قول و فعل میں کافی تضاد ہے۔ گاوں کی بات تو چھوڑ دیجئے راجدھانی لکھنو میں بھی بجلی نہیں ہے۔

ملائم سنگھ  کا بڑا اعلان : نہیں بنارہا کوئی نئی پارٹی ، تاہم بیٹے کو لے کر باپ کا چھلکا درد ، کہی یہ تلخ بات

ملائم سنگھ یادو

اکھلیش یادو سے وابستہ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اکھلیش میرا بیٹا ہے اور میرا آشیرواد ہمیشہ اس کے ساتھ ہے ، لیکن میں اس کے فیصلوں سے متفق نہیں ہوں۔ جو آدمی زبان کا پختہ نہیں ہو، وہ کسی کا نہیں ہوسکتا ہے۔ ساتھ ہی ساتھ ملائم نے یہ بھی کہا کہ میں اکھلیش کے جن فیصلوں سے خوش نہیں ہوں ، جلد ہی اس بابت اکھلیش کو بتا دوں گا۔

ملائم نے مزید کہا کہ اکھلیش نے مجھ سے کہا تھا کہ میں تین مہینے کیلئے ہی صدر کے عہدہ پر رہوں گا اور اس کے بعد آپ کو عہدہ دیدوں گا ، جو زبان کو پکا نہیں وہ کامیاب نہیں ہوگا۔ جس نے باپ کو دھوکہ دیا ہے دوسرے کے ساتھ کیا کرے گا۔ یہی بات ملک کے ایک بڑے لیڈر نے قنوج میں کہی تھی۔ ادھر اکھلیش یادو نے ملائم سنگھ کی پریس کانفرنس کے بعد ٹویٹ کیا کہ نیتاجی زندہ آباد ، سماجوادی پارٹی زندہ آباد

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز