ہائی کورٹ نے دہلی پولیس کو لگائی سخت پھٹكار، کہا : نجیب کو تلاش کریں ، عوام کے پیسے برباد نہ کریں

Mar 16, 2017 07:44 PM IST | Updated on: Mar 16, 2017 07:44 PM IST

نئی دہلی : جواہر لال نہرو یونیورسٹی کے لاپتہ طالب علم نجیب احمد کے معاملہ پر دہلی ہائی کورٹ نے دہلی پولیس کو سخت پھٹکار لگائی ہے۔ کورٹ نے جمعرات کو دہلی پولیس سے کہا کہ وہ عوام کا پیسہ برباد کرنے کی بجائے نجیب کو تلاش کرنے کی کوشش کریں۔ہائی کورٹ نے کہا کہ دہلی پولیس صرف کاغذی کام پر ہی توجہ دے رہی ہے اور عوام کا پیسہ برباد کر رہی ہے ، لیکن ہمیں اس معاملہ میں جلد سے جلد سے نتیجہ چاہئے ۔ معاملہ کی اگلی سماعت 10 اپریل کو ہوگی ۔

خیال رہے کہ نجیب گزشتہ 5 ماہ سے جے این یو کیمپس سے لاپتہ ہے۔ 14 اکتوبر کی رات جے این یو کے ماہی مانڈوي ہاسٹل میں اے بی وی پی کے طلبہ کے تنازع کے بعد سے ہی نجیب لاپتہ ہے اور اس کا اب تک کوئی سراغ نہیں مل پایا ہے۔نجیب کے لاپتہ ہونے کا معاملہ دہلی ہائی کورٹ میں ہے۔ دہلی پولیس کو بھی میں انکوائری کی تفصیلات عدالت کو دیتے رہنے کی ہدایت ملی ہوئی ہے۔

ہائی کورٹ نے دہلی پولیس کو لگائی سخت پھٹكار، کہا : نجیب کو تلاش کریں ، عوام کے پیسے برباد نہ کریں

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز