ٹیرر فنڈنگ ​​کیس میں سات علاحدگی پسند رہنماؤں کو این آئی اے نے کیا گرفتار

Jul 24, 2017 04:24 PM IST | Updated on: Jul 24, 2017 04:24 PM IST

نئی دہلی : ٹیرر فنڈنگ ​​کیس کے معاملہ میں پیر کو قومی جانچ ایجنسی این آئی اے نے سات علاحدگی پسند رہنماؤں کو گرفتار کیا ہے۔ ان پر دہشت گردی کو فروغ دینے کے لئے بیرون ملک سے فنڈ اکٹھا کرنے اور انہیں یہاں دہشت گردوں تک پہنچانے کا الزام ہے۔ جن علاحدگی پسند رہنماؤں کو گرفتار کیا گیا ہے ان میں الطاف شاہ، ایاز اکبر، پیر سیف اللہ ، شاہد الاسلام، معراج الدین كلول، بٹا كراٹے اور نعیم خان شامل ہیں۔

بٹا کراٹے کو این آئی اے نے دہلی سے گرفتار کیا جبکہ باقی دیگر علاحدگی پسند رہنماؤں کی گرفتاری سرینگر سے کی گئی۔ سری نگر سے اب ان لیڈروں کو مزید تحقیقات اور پوچھ گچھ کے لئے دہلی لایا جا رہا ہے۔

ٹیرر فنڈنگ ​​کیس میں سات علاحدگی پسند رہنماؤں کو این آئی اے نے کیا گرفتار

غور طلب ہے کہ ایک نیوز چینل پر اسٹنگ آپریشن میں دکھایا تھا گیا کہ حریت لیڈر نعیم خان مبینہ طور پر یہ کہہ رہے تھے کہ انہیں حوالہ کے ذریعے پاکستان کی دہشت گرد تنظیموں سے فنڈنگ ​​مل رہی ہے۔ اسی انکشاف کے بعد این آئی اے نے ان پر شکنجہ کسا اور جانچ شروع کر دی۔

مئی میں این آئی اے نے اسی سلسلے میں متعدد علاحدگی پسند لیڈروں سے پوچھ گچھ کی تھی۔ ان میں سے کچھ کو دہلی لا کر بھی پوچھ گچھ کی گئی تھی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز