Live Results Assembly Elections 2018

این آئی اے کا سنسنی خیز انکشاف ، فیس بک کے ذریعہ کشمیر میں پتھر بازی کراتی ہے آئی ایس آئی

این آئی اے نے دہشت گردوں کو غیر ملکی فنڈنگ کی جانچ کے دوران پتھر بازی کے کھیل کا انکشاف کیا ہے۔ این آئی اے نے اپنے ڈوزیئر میں 48 پتھربازوں کے فیس بک پروفائل بھی شامل کئے ہیں۔

Aug 02, 2017 08:39 PM IST | Updated on: Aug 02, 2017 08:40 PM IST

سری نگر : این آئی اے نے دہشت گردوں کو غیر ملکی فنڈنگ کی جانچ کے دوران پتھر بازی کے کھیل کا انکشاف کیا ہے۔ این آئی اے نے اپنے ڈوزیئر میں 48 پتھربازوں کے فیس بک پروفائل بھی شامل کئے ہیں۔ یہ وہ لڑکے ہیں جو کشمیر کے پلوامہ، اننت ناگ، بڈگام، کولگام، ترالت، اونتي پورا، شوپیاں اور بارہمولہ میں سنگ باری کے واقعات میں ملوث تھے۔ نیوز 18 انڈیا کے پاس کچھ ایسے فیس بک پروفائل کی معلومات ہیں، جن سے علیحدگی پسندوں اور تتھربازوں کے تعلقات کا انکشاف ہوتا ہے۔

ان میں کسی نے فیس بک پر اپنی شناخت بورن ٹو ڈائی رکھی ہے۔ کسی نے اپنے نام کے آگے آزاد جوڑ رکھا ہے ۔ ان لڑکوں کے فیس بک اکاؤنٹ میں ہندوستان مخالف تصاویر اور نعروں کی بھرمار ہے۔ ایک نے تو ایک ہزار روپے کے ایسے نوٹ کی تصویر لگائی ہے، جس میں آر بی آئی کی جگہ اسلامی بینک آف کشمیر لکھا ہے، اور گاندھی جی کی جگہ سید علی شاہ گیلانی کی تصویر چھپی ہوئی ہے۔ پاکستان اور کشمیر میں موجود تمام خونخوار دہشت گردوں کی تصاویر ایسے پروفائل پر موجود ہیں۔ این آئی اے نے ان پتھربازوں کی کئی ماہ کی کال تفصیلات کی بھی جانچ پڑتال کی ہے۔

این آئی اے کا سنسنی خیز انکشاف ، فیس بک کے ذریعہ کشمیر میں پتھر بازی کراتی ہے آئی ایس آئی

file photo

این آئی اے کی تفتیش میں انکشاف ہوا ہے کہ تمام 48 پتھرباز کچھ علیحدگی پسند رہنماؤں کے مسلسل رابطے میں تھے، جو کسی بھی واقعہ کے بعد پتھر برسانے کے لئے پہنچ جاتے تھے۔ این آئی اے کا دعوی ہے کہ چھوٹے علیحدگی پسند لیڈر ان پتھربازوں کو پیسے دیا کرتے تھے اور چھوٹے علیحدگی پسند لیڈروں کو اس کے لئے بڑے لیڈروں سے پیسے ملتے تھے۔

علیحدگی پسند جن لڑکوں کو پتھرباز بناکر استعمال کر رہے ہیں، ان میں زیادہ تر اسکول اور کالج کے طالب علم ہیں۔ علیحدگی پسندوں پر شکنجہ کسنے کے لئے این آئی اے اب ایسے پیشہ ورانہ پتھربازوں پر بھی کارروائی کرنے کا پلان تیار کر چکی ہے۔

Loading...

سیکورٹی فورسز کے کسی بھی بڑے آپریشن کے وقت پیشہ ورانہ پتھرباز دہشت گردوں کو بچانے کے لئے پہنچ جاتے ہیں۔ اسی سنگ باری کی وجہ سے سیکورٹی فورسز کو ایک ساتھ دو محاذوں پر لڑنا پڑتا هے۔ سیکورٹی ایجنسیاںں سنگ باری کے کھیل کی پرت ہٹانے میں مصروف ہیں۔ ماہرین کا بھی ماننا ہے کہ اس کے پیچھے پاکستان اور آئی ایس آئی کا ہاتھ ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز