ایل او سی سے متصل گاؤں سے 1000 لوگوں کو نکالا گیا باہر، پاکستان کر رہا ہے فائرنگ

May 14, 2017 09:21 AM IST | Updated on: May 14, 2017 09:55 AM IST

سری نگر : پاکستان کی جانب سے جموں و کشمیر میں لائن آف کنٹرول پر فائرنگ جاری ہے ۔  پاکستانی فوج کے نشانے پر رہائشی علاقے ہیں ۔ ہندوستانی فوج نے تقریبا ایک ہزار لوگوں کو ان کے گھروں سے نکال کر محفوظ مقامات پر پہنچایا ہے ۔ ہفتہ کو دہشت گردوں نے پلوامہ میں فوج کے ایک قافلے پر حملہ بھی کیا تھا ۔

فوج نے بتایا کہ راجوری سیکٹر کے منكوٹ اور چٹی بكری میں پاکستان کی جانب سے فائرنگ کی جا رہی ہے ۔ خیال رہے کہ ہفتہ کی نوشیرا سیکٹر میں فائرنگ میں دو ہندوستانی شہریوں کی موت ہو گئی تھی ۔ جبکہ کئی زخمی ہو گئے تھے۔

ایل او سی سے متصل گاؤں سے 1000 لوگوں کو نکالا گیا باہر، پاکستان کر رہا ہے فائرنگ

Photo PTI

پاکستان کی فائرنگ کا ہندوستانی فوج کرارا جواب دے رہی ہے ۔ اطلاعات کے مطابق ہندوستانی دیہات پر مارٹر اور چھوٹے ہتھیاروں سے حملہ کیا جا رہا ہے ۔ یہ حملہ گزشتہ چار دن سے جاری ہے ۔

لوگوں کو بنکروں میں بھی پناہ لینی پڑی ہے ۔ اس سے پہلے پاکستان کی فائرنگ رینج میں آنے والے ہندوستانی علاقوں کے اسکول کو تا حکم ثانی بند کر دیا گیا ۔ اسپتالوں کو بھی الرٹ جاری کیا گیا ہے ۔ نیوز 18 کے مطابق ڈاکٹروں کی چھٹیاں منسوخ کر دی گئی ہیں ۔

وزارت دفاع کے ترجمان لیفٹیننٹ کرنل منیش مہتا نے ہفتہ کو بتایا تھا نوشیرا میں کنٹرول لائن کے قریب واقع ہماری چوکیوں پر اندھا دھند فائرنگ کی جاری ہے۔ انہوں نے ہفتہ کی صبح 7.15 بجے فائرنگ شروع کی ۔ فوج حملے کا معقول جواب دے رہی ہے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز