گینگ ریپ متاثرہ بچی کا الزام : والدین نےکیا 20 لاکھ میں سودہ

نئی دہلی : مرکزی دہلی کی ایک 15 سال کی بچی سے گینگ ریپ کے بعد اس کے ماں ۔باپ نے ملزمین سے 20 لاکھ روپیے میں سودہ کر لیا اور بچی پر بیان بدلنے کازور ڈالا

Apr 16, 2018 11:32 PM IST | Updated on: Apr 16, 2018 11:32 PM IST

نئی دہلی : مرکزی دہلی کی ایک 15 سال کی بچی سے گینگ ریپ کے بعد اس کے ماں ۔باپ نے ملزمین سے 20 لاکھ روپیے میں سودہ کر لیا اور بچی پر بیان بدلنے کازور ڈالا۔ بچی اپنا بیان بدلنے کو تیار نہیں ہو ئی تو اس کے ماں باپ اس کے ساتھ مار پیٹ کرنے لگے۔

امن وہار میں رہنے والی اس بچی نے اپنے پڑوسی اور ان کی بیوی کی مدد سے اپنے ماں باپ کے خلاف پولیس میں شکائت درج کروائی ہے ۔ بچی کے والدین نے کیس کوختم کرنے کے لئے ملزمین سے 20 لاکھ میں سودا کر لیا تھا۔ اس کے لئے انہوں نے ائڈوانس کے طور پر 5 لاکھ روپیے لے بھی لئے تھے۔

گینگ ریپ متاثرہ بچی کا الزام : والدین نےکیا 20 لاکھ میں سودہ

علامتی تصویر

بچی نے پریم نگر پولیس تھانہ میں اپنے ماں باپ کے خلاف ایف آئی آر درج کرائی ہے ۔ وہ اپنے والدین کو ملے پانچ لاکھ روپیے لے کر تھانے پہونچی اور اپنی آپ بیتی پولیس کو بتائی ۔ متاثرہ نابالغ کے مطابق اس کا ایک سال پہلے گینگ ریپ ہوا تھا ۔ ملزمین میں سے ایک ملزم سنیل شاہی فی الحال جیل سے باہر ہے ۔ بچی نے بتایا کہ شاہی نے بیان بدلوانے کے بدلے میں اس کے والدین کو 20 لاکھ روپیے کا لالچ دیا اور اس کے ماں باپ اس کے لئے راضی ہو گئے ۔ بچی نے بتا یا کہ منا کرنے پر اسکے والدین نے اسے جان سے مارنے کی دھمکی بھی دی۔

بچی نے کہا ’’ 8اپریل کو شام 5 بجے سنیل شاہی اپنی کار سے میرے پاس آیا اور بولا کہ اگر میں نے اپنے ماں باپ کی نات نہیں مانی تو وہ مجھے غائب کروا دیگااور مجھ سے غلط کام کروائگا۔ اس کے بعد 9 اپریل کو سنتوش پریہار اور رمن نے گھر آکر میر ے والدین کو 5 لاکھ روپیے دئے ۔‘‘ بچی نے یہ بھی بتا یا کہ 10 اپریل کو جب اس کے ماں باپ کورٹ چلے گئے تو وہ پانچ لا کھ روپیے لےکر پولیس اسٹیشن پہونچ گئی۔

اس معاملہ میں پولیس نے ان روپیوں کو ضبط کر لیا اور تفتیش کے بعد متاثرہ کے والدین اور دیگر پانچ ملزمین کے خلاف مجرمانہ سازش ، دھمکی دینے ، لالچ دے کر کورٹ میں غلط گواہی دینے اور نابالغ کے ساتھ ظلم کرنے کے خلاف جوینائل جسٹس ایکٹ کی تحت معاملہ درج کر لیا ۔ متاثرہ کی ماں کو اتوار کے روز حراست میں لے لیا گیا ہے وہیں دوسری جانب والد فرار ہے ۔ غور طلب ہے کہ بچی کو ناری نکیتن کیندر میں رکھا گیا ہے ۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز