باتھ روم میں رین کوٹ پہن کر نہانا منموہن ہی جانتے ہیں: مودی، مودی کا تبصرہ ناقابل قبول: کانگریس

نئی دہلی۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے نوٹوں کی منسوخی کی مخالفت کرنے کے لئے سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ پر کل طنز کرتے ہوئے کہا کہ ان کے دور میں گھپلے پر گھپلے ہوتے رہے لیکن انہوں نے اپنے اوپر داغ نہیں لگنے دیا کیونکہ 'باتھ روم میں رین کوٹ' پہن کر نہانا وہی جانتے ہیں۔

Feb 09, 2017 08:44 AM IST | Updated on: Feb 09, 2017 08:44 AM IST

نئی دہلی۔  وزیر اعظم نریندر مودی نے نوٹوں کی منسوخی کی مخالفت کرنے کے لئے سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ پر کل طنز کرتے ہوئے کہا کہ ان کے دور میں گھپلے پر گھپلے ہوتے رہے لیکن انہوں نے اپنے اوپر داغ نہیں لگنے دیا کیونکہ 'باتھ روم میں رین کوٹ' پہن کر نہانا وہی جانتے ہیں۔ مسٹر مودی نے راجیہ سبھا میں صدر جمہوریہ کے خطاب پر شکریہ تحریک پر ہوئی بحث کا جواب دیتے ہوئے  جب یہ طنزیہ تبصرہ کیا تو کانگریس کے ارکان تلملا گئے اور اپنی نشستوں سے اٹھ کر ایوان میں آگے آ گئے اور شور مچانے لگے۔ کانگریس کے ارکان نے اس کی مخالفت میں ایوان سے واک آؤٹ کرنے کا فیصلہ کیا لیکن مسٹر سنگھ کچھ دیر تک اپنی سیٹ پر ڈاکٹر کرن سنگھ کے ساتھ خاموشی سے بیٹھے رہے۔ کانگریس کے پی چدمبرم اور کپل سبل نے ان کے پاس جا کر انہیں ایوان سے باہر چلنے کے لئے کہا۔ تب مسٹر سنگھ ان کے پیچھے پیچھے ایوان سے چلے گئے۔

اس سے پہلے وزیر اعظم نے مسٹر سنگھ پر طنزکرتے ہوئے کہا کہ مسٹر سنگھ گزشتہ تقریبا 30 سے 35 سالوں سے ملک کے اقتصادی فیصلوں میں شامل رہے اور ان میں ان کا فیصلہ کن رول بھی رہا۔ اس دوران کتنے ہی گھپلے ہوئے لیکن مسٹر سنگھ پر کوئی داغ نہیں لگا اور سیاستدانوں کو ڈاکٹر صاحب سے یہ بات سیکھنی چاہئے۔ انہوں نے کہا، "باتھ روم میں رین کوٹ پہن کر نہانا ڈاکٹر صاحب ہی جانتے ہیں۔ "اس تبصرے کے بعد کانگریس اور سماج وادی پارٹی کے تمام ارکان نے واک آؤٹ کیا۔ اس پر برسر اقتدار جماعت کے ارکان نے کہا کہ کانگریس کے ارکان بغیر سچ سنے بھاگ رہے ہیں۔ کانگریس کے واک آؤٹ کے بعد مسٹر مودی نے کہا کہ مسٹر سنگھ نے گزشتہ اجلاس میں نوٹوں کی منسوخی کی مخالفت کرتے ہوئے حکومت کے لئے سنگین بھول اور لوٹ جیسے الفاظ کا استعمال کیا تھا۔ انہوں نے کہا، "ہم ان کے ہی انداز میں انھیں جواب دینا جانتے ہیں۔"

باتھ روم میں رین کوٹ پہن کر نہانا منموہن ہی جانتے ہیں: مودی، مودی کا تبصرہ ناقابل قبول: کانگریس

وہیں، وزیر اعظم نریندر مودی کی طرف سے راجیہ سبھا میں سابق وزیر اعظم ڈاکٹر منموهن سنگھ کے خلاف کئے گئے تبصرے سے ناراض کانگریس نے  کہا کہ وزیر اعظم کا تبصرہ ناقابل قبول اور نامناسب ہے۔ کانگریس کے سینئر لیڈروں پی چدمبرم، آنند شرما اور کپل سبل نے مسٹر مودی کی طرف سے ڈاکٹر سنگھ کے لئے منتخب کئے گئے الفاظ پر سخت ناگواری اور ناراضگی ظاہر کی۔ ان لیڈروں نے صحافیوں سے بات چیت میں کہا، "ڈاکٹر منموهن سنگھ کے بارے میں اس طرح کا نازیبا بیان دینا نامناسب ہے۔ ہم اس سے سخت ناراض اور غصے میں ہیں۔ " مسٹر چدمبرم نے کہا، "ہم نے وزیر اعظم کے اس بیان پر اپنا احتجاج ظاہر کرنے کے لئے ایوان سے واک آؤٹ کیا۔"

مسٹر شرما نے کہا کہ کانگریس نے کبھی وزیر اعظم کو ان کے نام سے نہیں پکارا۔ انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم مغرور رویہ اختیار کئے ہوئے ہیں اور پورے اپوزیشن کی توہین کرنے میں لگے ہوئے ہیں ۔ انہوں نے اس وقت کے وزیر اعظم محترمہ اندرا گاندھی کی بھی توہین کی۔ وہ سابق وزیر اعظم کے لئے ناقابل قبول زبان استعمال کرنے میں لگے ہیں۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز