Live Results Assembly Elections 2018

پردیومن قتل کیس : بس کنڈیکٹر کا کنبہ اب پولیس اہلکاروں کے خلاف درج کرائے گا کیس

سی بی آئی جانچ سے اس کیس میںنیا موڑ آگیا ، جس کے بعد بس کنڈیکٹر اشوکمار کو کلین چٹ مل گئی ۔

Nov 10, 2017 03:13 PM IST | Updated on: Nov 10, 2017 03:13 PM IST

گروگرام : گروگرام کے پردیومن قتل کیس میں سی بی آئی ایک الگ تھیوری پر کام کررہی ہے ۔ سات سالہ پردیومن کے قتل کے الزام میں سی بی آئی نے اسکول کے ہی ایک طالب علم کو گرفتار کیا ہے ، جس کی وجہ سے کیس میں تفتیش کو لے کر گروگرام پولیس سوالات کی زد میں ہے۔

کیس کو چند گھنٹوں میں ہی سلجھا لینے کی جلد بازی میں پولیس نے بس کنڈیکٹر اشوک کمار کو ہی ملزم بنادیا تھا ۔ بتایا جارہا ہے کہ اشوک نے پولیس کے دباو میں آکر اس گناہ کا اعتراف بھی کرلیا تھا ، جس کو اس نے کیا ہی نہیں تھا۔

پردیومن قتل کیس : بس کنڈیکٹر کا کنبہ اب پولیس اہلکاروں کے خلاف درج کرائے گا کیس

سی بی آئی جانچ سے اس کیس میںنیا موڑ آگیا ، جس کے بعد بس کنڈیکٹر اشوکمار کو کلین چٹ مل گئی ۔ اب اشوک کا کنبہ ان پولیس اہلکاروں کے خلاف کیس کرانے کا ارادہ بنارہا ہے ، جنہوں نے اسے اس معاملہ میں اشوک کو پھنسیایا تھا۔ وہیں اس معاملہ میں ایک اور طالب علم کا نام بھی سامنے آرہا ہے ۔ تاہم سی بی آئی نے ابھی تک اس کو گرفتار نہیں کیا ہے۔

اشوک کے والد نے کہا : بیٹے کو پولیس نے نشہ کا ڈوز دیا

Loading...

بس کنڈیکٹر اشوک کمار کے والد امیرچند نے بتایا کہ سی بی آئی کی جانچ میں معاملہ صاف ہوچکا ہے ، میرے بیٹے کو پولیس نے بلی کا بکرا بنایا تھا۔ ہم گروگرام پولیس اور ایس آئی ٹی افسروں کے خلاف کیس دائر کریں گے۔ انہوں نے بتایا کہ ان لوگوں نے میرے بیٹے کو بہت زیادہ اذیت پہنچائی ، اسے نشہ کا ڈوز دیا گیا ، جس سے اس نے میڈیا کے سامنے اعتراف جرم کرلیا ، جو اس نے کیا ہی نہیں تھا۔ امیرچند نے پولیس افسروں کے خلاف کیس درج کرنے کیلئے گاوں والوں سے مالی مدد کی بھی اپیل کی ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز