اینٹی رومیو اسکواڈ پر تبصرے کے لئے پرشانت بھوشن نے مانگی معافی ، ڈیلیٹ کئے متنازعہ ٹویٹ

Apr 04, 2017 04:06 PM IST | Updated on: Apr 04, 2017 04:07 PM IST

نئی دہلی۔ معروف وکیل اور سوراج انڈیا کے لیڈر پرشانت بھوشن نے اتر پردیش میں خواتین کے ساتھ چھیڑ چھاڑ روکنے کے لئے ریاستی پولیس کے اینٹی رومیو اسکواڈ پر دئے گئے اپنے متنازعہ بیان پر آج معافی مانگتے ہوئے ٹوئٹر سے بھی اس بیان کو ڈیلیٹ کر دیا ہے۔ وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ کے حکم پر خواتین کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کو روکنے کے لئے اسکواڈ بنانے پر مسٹر بھوشن نے اس کا موازنہ شری کرشن سے کیا تھا۔ انہوں نے شری کرشن کو چھیڑخانی کرنے والا بتایا تھا جبکہ رومیو کو محبت کرنے والا قرار دیا تھا۔

مسٹر بھوشن نے اپنے اس بیان پر اٹھے تنازعہ کے بعد آج ٹویٹ کر کے کہا "میں نے محسوس کیا ہے کہ رومیو اسکواڈ اور شری کرشن پر میرے ٹویٹس کو غلط طریقے سے لیا گیا۔ اس کی وجہ سے متعدد لوگوں کے جذبات مجروح ہو ئے۔ میں اس کے لئے معافی مانگتے ہوئے اپنے ٹویٹس ہٹا رہا ہوں. " انہوں نے کئی ٹویٹس کئے اور لکھا کہ میرے ٹویٹ کو غلط طریقے سے پیش کیا گیا۔ میرے ٹویٹ کا مطلب تھا کہ اینٹی رومیو اسکواڈ کی نظر میں تو شری کرشن بھی چھیڑ چھاڑ کرنے والے نظر آئیں گے۔ ایک اور ٹویٹ میں مسٹر بھوشن نے لکھا میں مذہبی ہوں لیکن بچپن سے ہی رادھا-کرشن کے لوک گیت سنے ہیں۔ میری والدہ مذہبی مزاج رکھتی تھیں اور ہمارے گھر میں بھگوان کی تصویر بھی ہے۔

اینٹی رومیو اسکواڈ پر تبصرے کے لئے پرشانت بھوشن نے مانگی معافی ، ڈیلیٹ کئے متنازعہ ٹویٹ

مسٹر بھوشن کے اس تبصرے سے ہندو تنظیموں میں کافی غصہ تھا اور ان کے خلاف لکھنؤ اور دہلی میں ایف آئی آر بھی درج کرائی گئی تھی۔ نوئیڈا واقع ان کی رہائش گاہ کے باہر نیم پلیٹ پر سیاہی لگانے کے علاوہ 48 گھنٹے کے اندر عوامی طور پر معافی نہیں مانگنے پر انجام بھگتنے کی دھمکی بھی دی گئی تھی۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز