دیویندر جھاجھريا اور سردار سنگھ کو کھیل رتن، پجارا اور ہرمن پریت ملے گا ارجن ایوارڈ

Aug 03, 2017 09:41 PM IST | Updated on: Aug 03, 2017 09:41 PM IST

نئی دہلی: ریو پیرالمپك کے گولڈ میڈلسٹ بھالا پھینک کھلاڑی دیویندر جھاجھريا اور سابق ہندوستانی ہاکی کپتان سردار سنگھ کو اس سال ملک کے اعلی ترین کھیل ایوارڈ راجیو گاندھی کھیل رتن اور کرکٹر چتیشور پجارا اور هرمن پريت کور کو باوقار ارجن ایوارڈ کے لیے نامزد کیا گیا ہے۔ ارجن ایوارڈ کمیٹی کی جمعرات کو یہاں میٹنگ میں جھاجھريا اور سردار کو کھیل رتن کے لئے نامزد کیا گیا جبکہ 17 کھلاڑیوں کی ارجن ایوارڈ کے لیے سفارش کی گئی۔

جھاجھريا نے گزشتہ سال ریو پیرالمپك میں بھالا پھینک ایف 46 مقابلے میں طلائی تمغہ جیتا تھا۔ وہ اس سے پہلے 2004 کے ایتھنز پیرالمپك میں بھی بھالا پھینک میں طلائی جیت چکے ہیں۔ راجستھان کے جھاجھريا نے اس کے علاوہ 2013 ء کی آئی پی سی عالمی چمپئن شپ میں طلائی تمغہ اور 2015 کی ہی آئی پی سی عالمی چمپئن شپ میں چاندی کا تمغہ جیتا تھا۔ دنیا کے بہترین مڈفيلڈرز میں شمار سردار سنگھ کی قیادت میں ہندستان نے 2014 کے انچیون ایشیائی کھیلوں میں 16 سال کے وقفے کے بعد ہاکی میں طلائی تمغہ حاصل کیا تھا اور ریو اولمپکس کے لئے براہ راست کوالیفائی کیا تھا۔

دیویندر جھاجھريا اور سردار سنگھ کو کھیل رتن، پجارا اور ہرمن پریت ملے گا ارجن ایوارڈ

ارجن ایوارڈ کے لیے کرکٹر چتیشور پجارا اور خاتون کرکٹر هرمن پريت سنگھ، ریو پیرالمپك میں مرد ہائی جمپ میں کانسی کا تمغہ حاصل کرنے والے ورون سنگھ بھاٹی، باسکٹ بال کھلاڑی پرشاتي سنگھ، گولفر ایس ایس پی چورسیا اور خاتون فٹبالر اونم بیم بیم دیوی شامل ہیں۔ ان کے علاوہ ٹینس کھلاڑی ساکیت منیني، ریو پیرالمپك میں طلائی جیتنے والے ہائی جمپ کھلاڑی مريپن تھنگاویلو، خاتون آرچر ویجی سریكھا، کھلاڑی خوش بير کور اور آروكيا راجیو، ہاکی کھلاڑی ایس وی سنیل، پہلوان ستیہ ورت كاديان، ٹیبل ٹینس کھلاڑی انتھونی امل راج، شوٹر پی این ایس پرکاش ، کبڈی کھلاڑی جسویر سنگھ اور مکے باز دیویندر سنگھ کے نام کی ارجن ایوارڈ کے لیے سفارش کی ہیں۔

ریو پیرالمپك میں چاندی کا تمغہ حاصل کرنے والی خاتون شاٹ پٹر دیپا ملک کو 2012 میں ہی ارجن ایوارڈ مل چکا تھا۔اس طرح ریو پیرالمپك کے چار تمغے جیتنے والوں میں سے تین کو اس بار ایوارڈز سے نوازا جائے گا۔ جسٹس (ریٹائرڈ) سی کے ٹھکر کی صدارت والی کھیل رتن اور ارجن ایوارڈ کمیٹی کی کھیل رتن کیلئے جھاجھريا پہلی پسند تھے۔کمیٹی نے 31 سالہ سردار کو بھی کھیل رتن کے لئے نامزد کیا اور دونوں کو ہی یہ ایوارڈ مشترکہ طور پر دینے کی سفارش کی۔

ویسے حکومت کا اصول ہے کہ صرف اولمپکس سال میں ہی ایک سے زائد کھلاڑیوں کو کھیل رتن سے نوازا جائے اور دیگر سالوں میں ایک ایک کھلاڑی کو کھیل رتن دیا جائے۔لیکن کمیٹی نے اس روایت سے ہٹتے ہوئے اس سال دو کھلاڑیوں کو کھیل رتن دینے کی سفارش کر ڈالی ہے۔ 36 سالہ جھاجھريا پہلے پیراایتھلیٹ بنے ہیں جن کے نام کی کھیل رتن کے لئے سفارش کی گئی ہے۔جھاجھريا نے 2004 اور 2016 کے پیرالمپك کھیل میں نئے عالمی ریکارڈ بناتے ہوئے طلائی تمغہ جیتے تھے۔ سردار کی قیادت میں ہندستان نے نہ صرف گزشتہ ایشیائی کھیلوں کا طلائی تمغہ جیتا تھا بلکہ براہ راست ریو اولمپکس کا ٹکٹ بھی پایا تھا۔سردار کا شمار دنیا کے بہترین مڈفيلڈر میں ہوتا ہے۔جب وہ 2008 کے سلطان اذلان کپ میں ہندوستانی کپتان بنے تھے تو اس وقت کپتانی سنبھالنے والے وہ سب سے نوجوان کپتان بنے تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز