سعودی عرب میں ایک ہزارسے زائد لڑکیاں شیخ کے چنگل میں پھنسی ہیں: رینا

جالندھر۔ بہترین مستقبل کا خواب دیکھنے والی سعودی عرب جانے والی لڑکیاں ٹریول ایجنٹ کے فریب کی وجہ سے وہاں جہنم سے بدتر زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔

Nov 20, 2017 11:32 AM IST | Updated on: Nov 20, 2017 11:32 AM IST

جالندھر۔ بہترین مستقبل کا خواب دیکھنے والی سعودی عرب جانے والی لڑکیاں ٹریول ایجنٹ کے فریب کی وجہ سے وہاں جہنم سے بدتر زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔ خارجہ امور کی وزیر سشما سوراج اور دمدمی ٹکسال کی مدد سے سعودی سے بچ کر آنے والی پنجاب کے ٹانڈہ اڑمڑ کی ایک لڑکی، رینا نے پریس کانفرنس میں یہ اطلاع دی ۔

انہوں نے بتایا کہ 16 اکتوبر 2016 کو وہ ٹریول ایجنٹ کے ذریعے سعودی عرب گئی تھی لیکن اس کے مالک شیخ کے خاندان نے یرغمال بنا کر کام کروایا اور اس کے ساتھ غیر انسانی سلوک کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس کی نصف تنخواہ بھی انہیں ادا نہیں کی گئی ۔

سعودی عرب میں ایک ہزارسے زائد لڑکیاں شیخ کے چنگل میں پھنسی ہیں: رینا

علامتی تصویر

رینا نے سوشل میڈیا کو ایک پیغام بھیجا اور کہا کہ اس نے محترمہ سوراج سے بچانے کے لئے درخواست کی ۔ رینا کل ہی اپنے خاندان میں واپس آئی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ تقریبا ایک ہزار لڑکیاں اب بھی شیخ کے چنگل میں پھنسی ہوئی ہیں اور وہ جہنم کی زندگی گذار رہی ہیں اور انہیں محترمہ سوراج سے بچانے کی درخواست کر رہی ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز