کنگارو گیند باز کی وجہ سے سچن بنے 'گاڈ آف کرکٹ'، اشون نے توڑا انہیں کا ریکارڈ

نئی دہلی۔ بنگلہ دیش کے خلاف کھیلے جا رہے ٹیسٹ میچ میں آر اشون نے ایک اور ریکارڈ اپنے نام کیا۔

Feb 12, 2017 01:19 PM IST | Updated on: Feb 12, 2017 01:22 PM IST

نئی دہلی۔ بنگلہ دیش کے خلاف کھیلے جا رہے ٹیسٹ میچ میں آر اشون نے ایک اور ریکارڈ اپنے نام کیا۔ مشفق الرحیم کا وکٹ لیتے ہی اشون سب سے تیز 250 وکٹ لینے والے دنیا کے پہلے بولر بن گئے ہیں۔ آر اشون نے 45 ٹیسٹ میچوں میں 250 وکٹ اپنے نام کئے ہیں۔ 250 وکٹ لینے والوں کی لسٹ میں اشون نے کئی گیند بازوں کو پچھاڑا ہے۔ ڈینس للی نے 48، ڈیل اسٹین نے 49، ایلن ڈونالڈ نے 50، وقار یونس نے 51 اور مرلی دھرن نے 51 ٹیسٹ میچ کھیل کر اتنے وکٹ لئے تھے۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ سچن تندولکر تیز گیند باز بننے کی امید میں 1987 میں ایم آر ایف پیس فاؤنڈیشن گئے تھے۔ تب اس کے کوچنگ ڈائریکٹر ڈینس للی نے انہیں مشورہ دیا تھا کہ وہ بولنگ کے بجائے اپنی توجہ بیٹنگ پرمرکوزکریں۔ اس کے بعد سچن نے پوری طرح بیٹنگ پر توجہ دی اور پھر اس کے بعد جو ہوا، وہ سب کو پتہ ہے۔

کنگارو گیند باز کی وجہ سے سچن بنے 'گاڈ آف کرکٹ'، اشون نے توڑا انہیں کا ریکارڈ

Loading...

دراصل، ڈینس للی نے 48 میچوں میں 23.37 کی اوسط سے 250 وکٹ لئے تھے۔ جنوبی افریقہ کے فاسٹ بولر ڈیل اسٹین کو بھی 250 وکٹ لینے کے لئے 49 ٹیسٹ میچ کھیلنا پڑا۔ جنوبی افریقہ کے ہی تیز بولر ایلن ڈونالڈ نے 50 ٹیسٹ میں 250 کے اعداد و شمار کو چھو لیا تھا۔

اس لسٹ میں اگلا نام آتا ہے پاکستان کے تیز گیند باز وقار یونس کا۔ وقار نے 51 ٹیسٹ میچوں میں 250 کے اعداد و شمار چھوئے۔ سری لنکا کے کرشمائی آف اسپنر مرلی دھرن نے 51 ٹیسٹ میچوں میں 250 ٹیسٹ وکٹ لئے تھے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز