نوٹ بندی اور جی ایس ٹی مودی کی پیداکردہ آفت، اقتدار میں آئے تو از سر نو غور کریں گے : راہل گاندھی

کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے آج جی ایس ٹی اور نوٹ بندی کے لئے حکومت پر زبردست حملہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ"مودی کی پیداکردہ آفت"ہے جس نے معیشت کو مفلوج کردیا ہے۔

Oct 26, 2017 09:34 PM IST | Updated on: Oct 26, 2017 09:34 PM IST

نئی دہلی: کانگریس نائب صدر راہل گاندھی نے آج جی ایس ٹی اور نوٹ بندی کے لئے حکومت پر زبردست حملہ کرتے ہوئے کہا کہ یہ"مودی کی پیداکردہ آفت"ہے جس نے معیشت کو مفلوج کردیا ہے۔ مسٹر گاندھی نے یہاں پی ایچ ڈی چیمبرس آف کامرس کے 112 ویں سالانہ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک اعتبار اور اعتمادسے چلتا ہے لیکن یہ حکومت عوام پر اعتماد نہیں کرتی ہے اور وزیر اعظم نریندر مودی یہ مانتے ہیں کہ اس ملک کا ہر فرد 'چور ہے۔ ان تمام وجوہات کی بنا پر اب عوام کا اس حکومت سے مکمل اعتبار ختم ہو گیا ہے۔

کانگریس کے نائب صدر نے کہا کہ حکومت نے نوٹ بندی اور جی ایس ٹی سے معیشت پر دوہرا حملہ کیا ہے۔ 8 نومبر کو نوٹ بندی کی برسی ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے اس فیصلے کے نتائج کو سمجھے بغیر راتوں رات اسے نافذ کردیا۔ وہ ملک کی معیشت کی یہ بنیادی بات بھی نہیں سمجھ سکے کہ 'ہر نقد رقم کالا دھن نہیں ہوتا اور ہر کالا دھن نقد نہیں ہوتا ۔ نوٹ بندي کی وجہ سے لوگوں کے روزگار چھن گئے، لوگ ایک اے ٹی ایم سے دوسرے اے ٹی ایم بھاگتے رہے اور متعددنے اپنی جان گنوا دی۔ مجموعی گھریلو مصنوعات اور برآمدات میں گراوٹ آئی۔ جی ایس ٹی کو 'کمپیوٹرائزڈ نیا لائسنس راج قرار دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اس سے تاجر طبقہ بہت زیادہ پریشان ہے۔

نوٹ بندی اور جی ایس ٹی مودی کی پیداکردہ آفت، اقتدار میں آئے تو از سر نو غور کریں گے : راہل گاندھی

انہوں نے یقین دہانی کرائی کہ کانگریس اس میں اصلاحات کے لئے حکومت پر دباؤ بنائے گی۔انہوں نے کہا کہ اگر یو پی اے حکومت اقتدار میں آتی ہے ، تو وہ جی ایس ٹی پر دوبارہ غور کریں گے۔ مسٹر گاندھی نے کہا کہ نوٹ بندي اور جی ایس ٹی کے دوہرے مار سے عوام درد سے کراہ رہی ہے لیکن مسٹر مودی اور وزیر خزانہ ارون جیٹلی سمیت پوری حکومت چلا -چلا کر کہہ رہی ہے کہ سب کچھ ٹھیک ہے۔ انہوں نے مسٹر مودی پر طنز کرتے ہوئے کہا، "اس حکومت کے پاس چوڑاسینا تو ہے، لیکن بڑا دل نہیں ہے۔ '

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز