سنت رام پال کو عدالت نے دو معاملوں میں کیا بری، دیگر معاملے چلتے رہیں گے

Aug 29, 2017 04:05 PM IST | Updated on: Aug 29, 2017 04:05 PM IST

حصار۔ ہریانہ کے حصار ضلع کے بڑوالا واقع ستلوک آشرم کےسنت رام پال کو سرکاری کام کاج میں رخنہ ڈالنے اور راستہ روک کر لوگوں کو یرغمال بنانے کے دو معاملوں میں آج یہاں ایک عدالت نے بری کردیا لیکن ان کے خلاف دیگر معاملے چلتے رہیں گے۔ جیوڈیشیل مجسٹریٹ کی مکیش کمار کی عدالت میں رام پال کے خلاف یہ فیصلہ مقدمہ نمبر 426 اور 427 میں سنایا۔ رام پال کے وکیلوں نے عدالت سے باہر آکر بتایا کہ ان کے موکل کو ان دو معاملوں میں بری کردیا گیا ہے۔ جبکہ دیگر معاملوں میں سماعت جاری رہے گی۔

ان معاملوں میں فیصلے کے لئے 24 اگست کی تاریخ مقرر کی گئی تھی لیکن ڈیرہ سچا سودا کے سربراہ بابا گرمیت رام رحیم کی سی بی آئی عدالت میں پیشی اور فیصلہ سنائے جانے کے پیش نظر پولس نے ایک عرضداشت داخل کرکے عدالت سے اسے ملتوی کرنے کی درخواست کی تھی جسے منظور کرلیا گیا تھا۔ عدالت میں آج فیصلہ ہونے کےپیش نظر سخت حفاظتی انتظامات کئے گئے تھے اور عدالت کے احاطے کے آس پاس، ٹاؤں پارک، بس اڈہ اور ریلوے اسٹیشن سمیت سبھی حساس مقامات پر تقریبا ایک ہزار پولس اہلکاروں کے علاوہ ریاستی مسلح پولس فورس اور نیم فوجی دستوں کی تین کمپنیاں تعینات کی گئی تھیں۔

سنت رام پال کو عدالت نے دو معاملوں میں کیا بری، دیگر معاملے چلتے رہیں گے

سنت رام پال: فائل فوٹو، گیٹی امیجیز۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز