وقف بورڈ معاملہ میں بیک فٹ پر یوگی حکومت ، ہٹائے گئے اراکین ہوئے بحال

Jul 09, 2017 06:19 PM IST | Updated on: Jul 09, 2017 06:19 PM IST

لکھنو : وقف بورڈ کے معاملہ میں یوگی حکومت بیک فٹ پر ہے او اسے اپنا فیصلہ واپس لینا پڑا ہے۔ ہائی کورٹ کی ہدایت کے بعد یوگی حکومت نے شیعہ اور سنی وقف بورڈ کے ہٹائے گئے اراکین کو بحال کر دیا ہے ۔ خیال رہے کہ گزشتہ دنوں ہائی کورٹ نے انہیں ہٹانے کے یوپی حکومت کے حکم کو منسوخ کر دیا تھا۔ اقلیتی بہبود محکمہ کی چیف سکریٹری مونیکا ایس گرگ نے شیعہ وقف بورڈ کے چھ اور سنی وقف بورڈ کے دو ارکان کو بحال کرنے احکامات جاری کیے ہیں۔

قابل ذکر ہے کہ حکومت کی تشکیل کے بعد وقف بورڈز میں تمام گھوٹالہ وغیرہ کے الزام لگاتے ہوئے یوگی حکومت نے معاملہ کی جانچ سی بی آئی سے کرانے کی سفارش کی تھی۔ اس دوران سنی وقف بورڈ کے ارکان جنید صدیقی، مولانا سید احمد علی کے علاوہ شیعہ بورڈ کے اختر حسن رضوی، عالمہ زیدی، سید ولی حیدر، افشاں زیدی، سید عازم حسین، نجم الحسن رضوی کو ہٹا دیا گیا تھا۔

وقف بورڈ معاملہ میں بیک فٹ پر یوگی حکومت ، ہٹائے گئے اراکین ہوئے بحال

file photo

ان نامزد ارکان نے ہائی کورٹ میں حکومت کے اس فیصلہ کو چیلنج کیا تھا، جس کے بعد ہائی کورٹ نے حکومت کا فیصلہ منسوخ کر دیا تھا۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز