خراب کارکردگی کی وجہ سے ہندوستانی ہاکی کوچ کے عہدہ سے ہٹائے گئے رولینٹ اولٹ مینس

Sep 02, 2017 05:41 PM IST | Updated on: Sep 02, 2017 05:41 PM IST

نئی دہلی : ہاکی انڈیا نے سینئر ٹیم کی حالیہ مایوس کن کارکردگی کے پیش نظر چیف کوچ رولینٹ اولٹ مینس کو برطرف کردیا ہے۔ ہاکی انڈیا نے اپنی ہائی پرفارمنس اور ڈیولپمنٹ کمیٹی کی سنیچر کو ختم ہوئی تین روزہ میٹنگ میں یہ فیصلہ کیا۔ یہ فیصلہ مردوں کی سینئر ٹیم کے ورلڈ لیگ سیمی فائنل ٹورنامنٹ اور یورپی دورے کی کارکردگی کو سامنے رکھتے ہوئے کیاگیا۔ فیصلہ کرتے وقت 2018 میں ہونے والے دولت مشترکہ کھیلوں ایشیائی کھیلو، عالمی کپ اور 2020 کے ٹوکیو اولمپک کو بھی سامنے رکھا گیا تاکہ ان اہم ٹونامنٹوں میں ٹیم بہتر کھیل کا مظاہرہ کرسکے۔

میٹنگ کے سب سے اہم فیصلوں میں اولٹ مینس کو چیف کوچ کے عہدے سے ہٹنے کے لیے کہا گیا حالانکہ ٹیم کی مجموعی فٹنس کے معیار کو بہتر کرنے میں ان کے کردار کی ستائش بھی کی گئی۔ میٹنگ میں اس بات پر زور دیاگیا کہ ٹیم کی کارکردگی یکساں طور پر بہتر نہیں رہی اور توقع کے مطابق بھی نہیں تھی۔ تین دن تک چلنے والی اس میٹنگ میں 24 ارکان نے حصہ لیا۔ہندوستانی مردوں کی سینئر ہاکی ٹیم کو ایک مضبوط اور کامیاب ٹیم بنانے کے لیے ارکان نے اپنے خیالات پیش کیے۔

خراب کارکردگی کی وجہ سے ہندوستانی ہاکی کوچ کے عہدہ سے ہٹائے گئے رولینٹ اولٹ مینس

اس کے علاوہ ہائی پرفارمنس اور ہاکی انڈیا کی سلیکشن کمیٹی سے کہا گیا کہ وہ سبھی سینئر اور ممکنہ کھلاڑیوں کی صلاحیتوں کا پوری طرح جائزہ لیں اور اپنی رپورٹ دیں تاکہ یہ دیکھا جاسکے کہ ان میں سے کن کھلاڑیوں کو ہٹا کر نوجوان کھلاڑیوں کو جگہ دی جاسکتی ہے۔  نوجوان کلاڑیوں پر مشتمل ٹیم نے اپنے یورپی دورے سے کافی امیدیں جگائی ہیں جسے ثابت ہوتا ہے کہ ٹیم میں تبدیلی کا وقت آگیا ہے۔ ہائی پرفارمنس ڈائریکٹر ڈیوڈ جان اولٹ مینس کی جگہ عارضی طور پر چیف کوچ کا عہدہ سنبھالیں گے ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز