آر ایس ایس سے وابستہ مسلم راشٹریہ منچ نے روہنگیا مسلمانوں سے متعلق مودی حکومت کے حلف نامہ کو بتایا صحیح 

Sep 18, 2017 10:42 PM IST | Updated on: Sep 18, 2017 10:42 PM IST

نئی دہلی: آر ایس ایس سے وابستہ تنظیم مسلم راشٹریہ منچ نے روہنگیا مسلمانوں کے سلسلے میں مرکزی حکومت کے سپریم کورٹ میں داخل حلف نامہ کا کھل کر حمایت کرتے ہوئے کہا کہ ملک کی سلامتی کے ساتھ کسی بھی طرح کا سمجھوتہ نہیں کیا جانا چاہئے۔ مرکزی حکومت نے سپریم کورٹ میں آج روہنگیا مہاجرین کا آنا اور یہاں رہنا ملک کے لئے سنگین خطرہ بتاتے ہوئے حلف نامہ داخل کیا ہے۔ حلف نامے میں عدالت سے اس معاملے میں مداخلت نہیں کرنے کی اپیل کی گئی ہے۔

مسلم راشٹریہ منچ کے کنوینر خورشید راجکا نے بیان جاری کرکے کہا ہیکہ ملک کی سلامتی سے کسی طرح کا کھلواڑ برداشت نہیں کیا جانا چاہئے ۔ منچ کا یہ بھی الزام ہے کہ روہنگیا مسلمان انتہاپسند تنظیم اسلامک اسٹیٹ سے جڑے ہوئے ہیں۔

آر ایس ایس سے وابستہ مسلم راشٹریہ منچ نے روہنگیا مسلمانوں سے متعلق مودی حکومت کے حلف نامہ کو بتایا صحیح 

روہنگیا پناہ گزینوں کے ایک گروپ کی فائل فوٹو: رائٹرز۔

مرکزکی طرف سے عدالت عظمی میں داخل حلف نامہ کو درست قدم بتاتے ہوئے منچ نے کہا کہ جو ملک روہنگیا مسلمانوں سے بہت ہمدردی دکھارہے ہیں ہماری ان سے اپیل ہے کہ وہ ان لوگوں کو اپنے یہاں پناہ دیں۔ ہندوستان میں ان کے لئے کوئی جگہ نہیں ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز