جموں و کشمیر میں پہلی بار سالانہ جائزہ اجلاس کا انعقاد کرے گا آر ایس ایس

May 17, 2017 08:15 AM IST | Updated on: May 17, 2017 08:15 AM IST

سری نگر۔ کشمیر میں جاری بدامنی کے درمیان آر ایس ایس پہلی بار جموں میں اس سال جولائی میں اپنا سالانہ جائزہ اجلاس منعقد کرے گا جس کا مقصد صاف طور پر علیحدگی پسندوں کو یہ پیغام دینا ہے کہ کشمیر ہندوستان کا اٹوٹ حصہ ہے۔ سنگھ کے ذرائع کے مطابق، آر ایس ایس چیف موہن بھاگوت، بی جے پی صدر امت شاہ اور وشو ہندو پریشد (وی ایچ پی) کے لیڈر 3 دن کے اجلاس میں شامل ہوں گے جس کا انعقاد 18 سے 20 جولائی کے درمیان ہو گا۔

ذرائع نے بتایا، 'وادی کشمیر میں علیحدگی پسندوں کو یہ پیغام دینے کے لئے کہ یہ ہندوستان کا اٹوٹ حصہ ہے اور سنگھ اس اتحاد کے لئے مصروف عمل ہے، اجلاس منعقد کیا جائے گا۔ اس کے لئے وقت اور جگہ طے کر لئے گئے ہیں۔ ' ذرائع نے ساتھ ہی اشارہ دیا کہ اجلاس میں پتھراؤ اور سی آر پی ایف جوانوں پر حملے کے واقعات پر بحث ہو سکتی ہے۔

جموں و کشمیر میں پہلی بار سالانہ جائزہ اجلاس کا انعقاد کرے گا آر ایس ایس

آر ایس ایس سربراہ موہن بھاگوت: فائل فوٹو

نو بھارت ٹائمس ڈاٹ کام کے مطابق، آر ایس ایس کے کل ہند تشہیری سربراہ منموہن ویدیہ نے رابطہ کئے جانے پر اجلاس کی تصدیق کی۔ انہوں نے کہا، 'یہ گزرے سال کے واقعات اور سرگرمیوں کا جائزہ لینے کے ساتھ ساتھ آنے والے وقت کے لئے کام کی منصوبہ بندی کا مسودہ تیار کرنے کے مقصد سے کیا جانے والا سنگھ  کا سالانہ جائزہ اجلاس ہے۔' منموہن نے کہا کہ اجلاس میں تربیتی کیمپوں کا جائزہ لیا جائے گا جسے آر ایس ایس ہر سال منعقد کرتا ہے۔

 

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز