گنگا جمنی تہذیب کو برقرار رکھنے کے لئے دہلی میں کھولا گیا سب کا گھر

Jun 19, 2017 05:13 PM IST | Updated on: Jun 19, 2017 05:13 PM IST

نئی دہلی۔ مذہب، ذات، صنف، رنگ اور حدود کی آ ڑ میں گنگا جمنی تہذیب کو نیست و نابود کرنے اورملک میں چل رہی زعفرانی آندھی کو جڑ سے ختم کرنے کے لئے اوکھلا جامعہ نگر میں ”خدائی خدمت گار“ تنظیم کی جانب سے ” سب کا گھر“ کے نام سے ایک گھرکا قیام عمل میں آیا جس کا افتتاح سابق جسٹس راجندرسچر کے ہاتھوں کیا گیا ۔ دہلی کے جامعہ نگر علاقہ میں سب کا گھر کے نام سے ایک گھر بنایا گیا ہے۔ اس میں ہر مذہب، ذات، صنف، رنگ کے افراد بلا تفریق مل جل کر رہیں گے اور ایک دوسرے کا تعاون بھی کرینگے ۔ ایک ساتھ بیٹھ کرکھانا بھی کھائینگے چاہے وہ کسی بھی صوبہ یا شہر کے ہوں ۔اس گھر کو قائم کرنے کا مقصد یہ ہے کہ ملک میں مذہب کے نام پر گنگا جمنی تہذیب میں زہر گھولنے اورایک خاص مذہب کے ماننے والوں کا مذہب کے نام پر طرح طرح کے الزامات عائد کرکے ظلم و ستم و قتل کرنے والوں تک امن وبھائی چارے کا پیغام پہنچایا جائے۔

اس افتتاحی جلسہ میں کچھ ایسے بھی افراد موجود تھے جو ایک خاص فرقہ کے لوگوں کے ظلم و ستم کے ستائے ہوئے تھے۔ یہ یہاں سب کا گھر میں رہنے کے لیے آئے ہوئے تھے ۔ جس میں ہندو، مسلم، سکھ ۔عیسائی وغیرہ شامل تھے ۔ یہاں ایک بات اور زیرغورآئی کہ آپ دوسروں کے لئے کام کریں ۔ محبت باٹیں، نفرت نہیں ۔ سادگی اپنائیں، شیخی نہیں ۔ ہمدردی سے پیش آئیں، بے حسی سے نہیں ۔ ایک دوسرے کا تعاون کریں مقابلہ آرائی نہیں ۔ ایک دوسرے کے غم وخوشی میں شریک ہوں اور انہیں ساری خوبیوں کو پورے ملک میں نفرت پھیلانے والوں کے درمیان میں عام کریں ۔

گنگا جمنی تہذیب کو برقرار رکھنے کے لئے دہلی میں کھولا گیا سب کا گھر

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز