فوجی سربراہ پراعتراض کے لئے نامناسب الفاظ استعمال کرنے پر سندیپ معذرت خواہ

Jun 12, 2017 03:57 PM IST | Updated on: Jun 12, 2017 04:01 PM IST

نئی دہلی۔ فوجی سربراہ بپن راوت کو ’’سڑک کا غنڈہ‘‘ قرار دینے پر ایک سے زیادہ حلقوں کی طرف سے لعنت ملامت کا سامنا کرنے کے بعد کانگریسی رہنما سندیپ دکشت نے آج اپنے بیان پر معافی مانگ لی۔ مسٹر دکشت نے کل اس وقت ایک تنازع کھڑا کردیا تھا جب انہوں نے فوجی سربراہ کو ’’سڑک کا غنڈہ‘‘ بتایا اور کہا کہ ہماری فوج پاکستانی فوج کی طرح مافیا آرمی نہیں جو سڑکوں پر غنڈوں کی طرح بیانات دیتی رہتی ہے۔ ہمارا فوجی سربراہ جب ’’سڑک کے غنڈے‘‘ کی طرح بیان دیتا ہے تو خراب لگتا ہے۔

مسٹر دکشت نے ، جو دہلی کی سابق وزیراعلی شیلا دکشت کے بیٹے ہیں، کہا کہ ہندوستانی فوج ایک عظیم ادارہ ہے جس کی اپنی ایک ثقافت ہے اور وہ نہیں سمجھتے کہ موجودہ فوجی سربراہ ہندوستانی فوج کی امیج پر پورے نہیں اترتے اور وہ سمجھتے ہیں کہ فوجی سربراہ کو سیاسی بیانات نہیں دینے چاہیئں۔ کانگریسی رہنما کے ریمارک پر بی جے پی نے سخت اعتراض کیا۔ بی جے پی کے سمبت پاترا نے صدر کانگریس سونیا گاندھی سے اس معاملے میں معافی کا مطالبہ کرتے ہوئے یہ مانگ بھی کی کہ ایسے لیڈروں کو فوراً نکال باہر کیا جائے۔ مسٹر سندیپ دکشت نے بعد ازاں ٹوئٹ کیا کہ فوجی سربراہ کے ایک بیان پر مجھے اعتراض ہے لیکن مجھے (اعتراض ظاہر کرنے کے لئے) مناسب الفاظ کا انتخاب کرنا چاہیے تھا، میں معذرت خواہ ہیں۔

فوجی سربراہ پراعتراض کے لئے نامناسب الفاظ استعمال کرنے پر سندیپ معذرت خواہ

کانگریس لیڈر سندیپ دکشت: فائل فوٹو

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز