ششی کلا نے جیل جانے سے پہلے پنیرسیلوم کو اے آئی اے ڈی ایم کے سے نکالا

Feb 14, 2017 11:59 AM IST | Updated on: Feb 14, 2017 04:01 PM IST

نئی دہلی۔  اے آئی اے ڈی ایم کے نے پنیرسیلوم کو پارٹی سے نکال دیا ہے۔ یہ فیصلہ ششی کلا کے گھر ہوئی ممبران اسمبلی کی میٹنگ میں لیا گیا۔ اس میٹنگ میں ای پلانی سامی کو پارٹی اراکین کا لیڈر بنایا گیا ہے۔ اس سے پہلے سپریم کورٹ نے ایک بڑا فیصلہ دیتے ہوئے تمل ناڈو میں وزیر اعلی بننے کا انتظار کر رہیں انا ڈی ایم کے کی جنرل سکریٹری وی کے ششی کلا کو مجرم قرار دیا۔ انہیں 4 سال کی سزا سنائی اور جلد سے جلد سرینڈر کرنے کو کہا ہے۔

سپریم کورٹ نے آمدنی کے معلوم ذرائع سے زیادہ اثاثہ رکھنے کے معاملے میں تمل ناڈو کی سابق وزیر اعلی آنجہانی جے للتا کی معاون وی کے ششی کلا کو آج مجرم قرار دیا۔ جسٹس پی سی گھوش اور جسٹس امیتابھ رائے کی بنچ نے کرناٹک ہائی کورٹ کے فیصلے کو پلٹتے ہوئے محترمہ ششی کلا اور دیگر کو مجرم گردانا۔ کورٹ نے انا ڈی ایم کے کی جنرل سکریٹری ششی کلا کو فوری طور پر خودسپردگی کرنے کا حکم دیا۔

ششی کلا نے جیل جانے سے پہلے پنیرسیلوم کو اے آئی اے ڈی ایم کے سے نکالا

ذیلی عدالت نے جے للتا، ششی کلا اور دو دیگر کو مجرم قرار دیتے ہوئے چار سال قید کی سزا سنائی تھی جسے کرناٹک ہائی کورٹ نے مسترد کر دیا تھا۔اس کے خلاف کرناٹک حکومت اور دیگر عرضی گذاروں نے عدالت عظمی کا دروازہ كھٹكھٹايا تھا۔سپریم کورٹ کے اس فیصلے کے ساتھ ہی محترمہ ششی کلا کا سیاسی کریئر تقریباً ختم ہو گیا ہے کیونکہ سزا پوری کرنے کے 10 سال بعد تک وہ الیکشن نہیں لڑ پائیں گی۔

ڈیڑھ دہائی پرانے اس کیس میں سپریم کورٹ سے ششی کلا کو مجرم ٹھہرائے جانے کے بعد اب انہیں جیل جانا پڑے گا اور تمل ناڈو کی سیاست کی سمت اب طے ہو گئی ہے۔ یعنی اب پنيرسیلوم ہی ریاست کے وزیر اعلی بنے رہیں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز