بابری مسجد - رام مندر تنازع : شیعہ سینٹرل وقف بورڈ چیئرمین وسیم رضوی کی مہنت گوپال داس سے ملاقات

Sep 15, 2017 08:50 PM IST | Updated on: Sep 16, 2017 08:53 AM IST

اجودھیا: شری رام جنم بھومی ٹرسٹ کے صدر مہنت نرتیہ گوپال داس نے شیعہ سینٹرل وقف بورڈ کے چیئرمین وسیم رضوی کے مندر مسجد کی تجویز کا خیر مقدم کیا ہے۔ مسٹر رضوی آج یہاں مہنت داس سے ان کی رہائش گاہ پر م ملنے آئے تھے۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ اجودھیا میں واقع متنازعہ رام جنم بھومی براجمان ا رام للا کے مقام پر ہی رام مندر کی تعمیر ہونی چاہیے اور متنازع مقام سے ہٹ کر مسلم اکثریتی علاقے میں مسجد کی تعمیر ہونی چاہیے جس کا نام مسجد امن رکھا جائے۔

مہنت داس سے ملاقات کے بعد مسٹر وسیم رضوی نے صحافیوں کو بتایا کہ عبادت کرنے کا حق دونوں کمیونٹیوں کے لوگوں کا ہے۔ اس لئے دونوں قوم کے لوگوں کے مذہبی جذبات کا احترام کرتے ہوئے شیعہ وقف بورڈ یہ تجویز تمام ہندو فریقوں کے سامنے رکھ رہا ہے، جس سے اس تنازعہ کا حل ہو سکے اور ملک میں امن و چین قائم ہو۔

بابری مسجد - رام مندر تنازع : شیعہ سینٹرل وقف بورڈ چیئرمین وسیم رضوی کی مہنت گوپال داس سے ملاقات

انہوں نے کہا کہ جس متنازعہ مقام پر مسجد کا دعوی کرتے ہوئے سنی وقف بورڈ کے لوگ مقدمہ لڑ رہے ہیں، اس مسجد پر سنیوں کا حق نہیں ہے بلکہ وہ مسجد شیعوں کی تھی۔ ہم اس معاملے پر مقدمہ بازی بھی نہيں کرنا چاہتے ہیں۔ ہم ملک میں امن چاہتے ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز