اکھلیش کو کمزور کرنے کے لئے اعظم خان کو وزیر اعلی کا چہرہ بنا سکتے ہیں شیوپال

ملائم ایک بڑا مسلم کارڈ كھیلتے ہوئے اعظم خان کو وزیر اعلی کا چہرہ بنا سکتے ہیں۔

Jan 09, 2017 01:12 PM IST | Updated on: Jan 09, 2017 01:12 PM IST

نئی دہلی۔ سائیکل کو لے کر الیکشن کمیشن پہنچی سماج وادی پارٹی کی فائنل ریس کے درمیان خبر آ رہی ہے کہ ملائم سنگھ یادو اپنے مشہور چرخہ داؤ کا استعمال اپنے بیٹے کے خلاف کرنے جا رہے ہیں۔ دراصل صلح اور معاہدے کی کئی راؤنڈ ملاقاتوں کے بے نتیجہ رہنے کے بعد اب یہ صاف ہو چکا ہے کہ اکھلیش اور ملائم دھڑے الگ الگ ہی انتخابی میدان میں ہوں گے۔ ایسے میں ملائم ایک بڑا مسلم کارڈ كھیلتے ہوئے اعظم خان کو وزیر اعلی کا چہرہ بنا سکتے ہیں۔ ذرائع سے مل رہی معلومات کے مطابق ملائم نے شیو پال یادو اور امر سنگھ سے اس بارے میں بات کی ہے۔ بتایا جا رہا ہے کہ امر اور شیو پال دونوں نے ہی اس پر اپنی رضامندی دے دی ہے۔ ذرائع کے مطابق اس سلسلے میں ملائم اور اعظم کے درمیان ملاقات بھی ہو سکتی ہے۔

بتا دیں کہ اعظم خان ملائم اور اکھلیش کے درمیان صلح کرانے کے لئے ثالث بھی بنے لیکن اس کے باوجود کوئی نتیجہ نہیں نکلا۔ فی الحال اب سب کی نگاہیں الیکشن کمیشن کے فیصلے پر ہیں۔ کمیشن کے فیصلے کے بعد ہی اس پر رسمی اعلان ہو سکتا ہے۔

اکھلیش کو کمزور کرنے کے لئے اعظم خان کو وزیر اعلی کا چہرہ بنا سکتے ہیں شیوپال

Loading...

ملائم کی 19 فیصد مسلم ووٹوں پر نظر

بتا دیں کہ اعظم خان سماج وادی پارٹی میں ایک بڑا مسلم چہرہ ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ملائم خیمہ انہیں اپنا وزیر اعلی چہرہ بنا کر 19 فیصد مسلم ووٹ کو اپنے پالے میں کرنے کی فراق میں ہے۔ اتنا ہی نہیں پارٹی سے جڑی کئی اقلیتی تنظیمیں بھی مسلم وزیر اعلی چہرہ اتارنے کا مطالبہ کر چکی ہیں۔ ایسا ہونے پر یقینی طور پر مسلم ووٹ میں بکھراو ہو گا اور اس کا نقصان اکھلیش کو اٹھانا پڑ سکتا ہے۔

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز