کانپور، بلیا، بارہ بنکی، لکھیم پور کھیری اور سنبھل میں کشیدگی کے بعد حالات معمول پر، 9 افراد گرفتار ، سیکورٹی سخت

Oct 02, 2017 01:02 PM IST | Updated on: Oct 02, 2017 01:02 PM IST

لکھنؤ: اتر پردیش کے متعدد اضلاع میں محرم کے موقع پر کل ہونے والی کشیدگی کے بعد اب حالات معمول پر ہیں۔ کشیدگی والے علاقوں میں کافی تعداد میں پولیس فورسز کی تعیناتی کی گئی ہے اور شرپسند عناصر کی گرفتاری کی جا رہی ہے۔ ریاست کے ایڈیشنل پولیس ڈائریکٹر جنرل (لااینڈ آرڈر)آنند کمار نے بتایا کہ کانپور، بلیا، بارہ بنکی، لکھیم پور کھیری، سنبھل اور کچھ دیگر علاقوں میں محرم کے موقع پر ہوئے ناگفتہ واقعات کے سلسلے میں 9 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ کانپور کے میں پتھروں کے واقعہ میں دس سے زائد پولیس اہلکار زخمی ہوئے ہیں، جبکہ بلیا میں ایک داروغہ اور تین سپاہی کو چوٹیں آئی ہیں۔

کانپور میں شرپسند عناصر نے گاڑیوں میں آگ لگا دی۔کئی دکانوں کو آگ کے حوالے کر دیا۔پولیس نے طاقت کا استعمال کرتے ہوئے ان عناصر کو منتشر کر دیا۔کانپور میں مرکزی سیکورٹی فورس اور پی اے سی کی اضافی ٹکریوں کو تعینات کیا گیا ہے۔حالات پر کڑی نظر رکھی جا رہی ہے اورصورتحال کی قریب سے نگرانی کی جا رہی ہے۔

کانپور، بلیا، بارہ بنکی، لکھیم پور کھیری اور سنبھل میں کشیدگی کے بعد حالات معمول پر، 9 افراد گرفتار ، سیکورٹی سخت

انہوں نے کہا کہ شرپسند عناصرکی گرفتاری کے لئے مہم تیز کی گئی ہے۔ اب تک نو افراد کو گرفتار کیا گیا ہے۔ متاثرہ علاقوں میں احتیاطا گشت بڑھادی گئی ہے۔ حساس علاقوں میں پولیس کو تعینات کیا گیا ہے۔ معزز شہریوں سے انتظامیہ بات چیت کررہی ہے اور حالات کو معمول پر لانے کیلئے پرزور کوششی کی جا رہی ہیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز