اترپردیش ضمنی انتخابات : سماجی انصاف کا سیاسی پیغام دیتی ہے یہ جیت : اکھلیش یادو

Mar 14, 2018 07:55 PM IST | Updated on: Mar 14, 2018 07:55 PM IST

لکھنو : گورکھپور اور پھولپور لوک سبھا ضمنی انتخابات میں سماجوادی پارٹی کی جیت کو پارٹی سربراہ اکھلیش یادو نے سماجی انصاف کا سیاسی پیغام دیتی جیت قرار دیا ہے۔ پارٹی کے صدر دفتر پر پریس کانفرنس میں اکھلیش یادو نے دونوں لوک سبھا حلقوں کے عوام کا شکریہ ادا کیا ۔ ساتھ ہی ساتھ بی ایس پی سپریمو کا بھی شکریہ ادا کیا ۔ اس کے ساتھ ہی راشٹریہ وادی کانگریس پارٹی ، پیس پارٹی سمیت سبھی اتحادی پارٹیوں کا بھی شکریہ ادا کیا جنہوں نے ایس پی امیدوار کی حمایت کی تھی۔

اکھلیش یادو نے کہا کہ گنتی کے جو اعداد و شمار آئے ہیں ، وہ بتا رہے ہیں کہ دونوں لوک سبھا سیٹوں کے لاکھوں افراد نے سماجوادی پارٹی کی حمایت کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اترپردیش کے اس ضمنی الیکشن سے سیاسی پیغام بھی نکلتا ہے ۔ اس الیکشن میں ایک وزیر اعلی کا حلقہ تھا تو دوسرا نائب وزیر اعلی حلقہ تھا ، اگر یہاں عوام میں اتنی ناراضگی ہے تو آنے والے وقت میں نتائج کا اندازہ لگایا جاسکتا ہے۔

اترپردیش ضمنی انتخابات : سماجی انصاف کا سیاسی پیغام دیتی ہے یہ جیت : اکھلیش یادو

اکھلیش یادو

اکھلیش نے کہا کہ ایوان میں یہ کہا جارہا ہے کہ میں ہندو ہوں ، میں عید نہیں مناتا ہوں ۔ اکھلیش نے کہا کہ ہم نے کبھی خود کو بیک ورڈ نہیں سمجھا ، لیکن سماجوادی اور بی ایس پی کیلئے کہا گیا کہ سانپ اور چھچھندر کا اتحاد ہوا ہے ، چور چور موسیرا بھائی سمیت نہ جانے کیا کیا کہا گیا ، آخر میں سماجودی پارٹی کو اورنگ زیب کی پارٹی ہی کہہ دیا گیا ۔ اکھلیش نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ غریبوں ، نوجوانوں اور کسانوں نے اس کا جواب دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ یہ کہیں نہ کہیں سماجی انصاف کی جیت بھی ہے ۔ اکھلیش نے کہا کہ آبادی میں جو زیادہ ہوں ، محنت کرنے والے ہوں ، انہیں کو کیڑا مکوڑا کہہ دیا گیا ۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز