ایس پی کانگریس اتحاد میں درپیش رکاوٹ کو دور کریں گی پرینکا، خفیہ قاصد کو اکھلیش کے پاس بھیجا

Jan 21, 2017 09:43 AM IST | Updated on: Jan 21, 2017 09:43 AM IST

نئی دہلی۔ سماج وادی پارٹی اور کانگریس میں الیکشن سے قبل اتحاد کو لے کر درپیش رکاوٹ کو حل کرنے کے لئے پرینکا گاندھی خود فعال ہو گئی ہیں۔ اس سلسلے میں پرینکا نے ایک خفیہ قاصد کو وزیر اعلی اکھلیش یادو کے پاس ملنے بھیجا تھا۔ بتایا جا رہا ہے کہ پرینکا گاندھی سماج وادی پارٹی سے اتحاد کو لے کر کافی سنجیدہ ہیں۔ تاہم، وہ قاصد کون ہے، اس کی معلومات نہیں مل پائی ہے۔

دراصل، جمعہ کو سماج وادی پارٹی نے اپنی پہلی فہرست جاری کر ان سیٹوں سے بھی امیدوار کھڑے کئے ہیں جہاں پر کانگریس ممبر اسمبلی گزشتہ اسمبلی انتخابات میں جیتے تھے۔ اس سے کانگریس اور سماج وادی پارٹی کی دوستی پر بحران کے بادل منڈلانے لگے ہیں۔

ایس پی کانگریس اتحاد میں درپیش رکاوٹ کو دور کریں گی پرینکا، خفیہ قاصد کو اکھلیش کے پاس بھیجا

کانگریس کو زیادہ سیٹیں دینے کے موڈ میں نہیں ایس پی

اس کے بعد ایس پی نائب صدر كرمی نندا کا بیان آیا کہ ویسے تو کانگریس کا حق صرف 54 سیٹوں پر بنتا ہے، لیکن وہ  اسے 84-85 سیٹ دینے کو تیار ہیں۔ ان کے بیان سے صاف تھا کہ کانگریس کو اس سے زیادہ سیٹیں دینے کے موڈ میں ایس پی نہیں ہے۔

ان سب کے درمیان ایس پی نے اپنی دوسری فہرست بھی جاری کر دی۔ اس کے بعد کانگریس ریاستی صدر راج ببر اکھلیش سے ملنے لکھنؤ واقع ان کی سرکاری رہائش گاہ 5 کالی داس مارگ پہنچے۔ اکھلیش سے ملنے کے بعد راج ببر نے کہا اتحاد کا عمل ابھی جاری ہے۔ جو لوگ کہہ رہے ہیں کہ اتحاد کو لے کر کانگریس مثبت رخ نہیں اپنا رہی ہے، وہ غلط ہیں۔

اس درمیان اجے ماکن نے بھی کہا کہ بات چیت جاری ہے۔ جلد ہی غلام نبی آزاد اکھلیش سے ملاقات کر پھر سے اتحاد پر گفتگو کریں گے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز