طلبہ یونین انتخابات : ماہرین قانون سے رائے لینے کی یقین دہانی کے بعد جامعہ ملیہ میں طلبہ کی بھوک ہڑتال ختم

مرکزی یونیورسٹی جامعہ ملیہ اسلامیہ میں طلبہ یونین کے انتخابات کے مطالبے پر طلبہ و طالبات کی بھوک ہڑتال آج نویں دن ختم ہو گئی۔

Nov 02, 2017 08:59 PM IST | Updated on: Nov 02, 2017 08:59 PM IST

نئی دہلی: مرکزی یونیورسٹی جامعہ ملیہ اسلامیہ میں طلبہ یونین کے انتخابات کے مطالبے پر طلبہ و طالبات کی بھوک ہڑتال آج نویں دن ختم ہو گئی۔ احتجاج کرنے والے طلبہ و طالبات کے ایک وفد نے کل شام وائس چانسلر طلعت احمد سے ملاقات کی تھی۔ طلبہ یونین کی بحالی سے متعلق عدالت میں زیر التواء معاملے پر قانونی ماہرین کی رائے لینے پر رضامندی بننے کے بعد بھوک ہڑتال ختم کی گئی ہے۔ قانونی ماہرین کی مدد سے انتظامیہ اور طالب علموں کے نمائندوں کے ذریعہ ہی اس کا حل نکالا جائے گا۔

وائس چانسلر نے صاف الفاظ میں کہا ہے کہ وہ طلبہ یونین کی بحالی کے خلاف نہیں ہیں لیکن معاملہ عدالت میں زیر غور ہونے کی وجہ سے وہ اس معاملے میں فیصلہ نہیں کرسکتے ہیں۔

طلبہ یونین انتخابات : ماہرین قانون سے رائے لینے کی یقین دہانی کے بعد جامعہ ملیہ میں طلبہ کی بھوک ہڑتال ختم

واضح ر ہے کہ طلبہ یونین کی بحالی کے مطالبے پر جامعہ ملیہ میں طلبہ و طالبات گزشتہ نو دنوں سے بھوک ہڑتال کر رہے تھے۔ اس دوران دو طالب علموں کو طبیعت خراب ہونے کی وجہ سے اسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔ طالب علموں کے جوائنٹ ایکشن فورم نے یہ تحریک چلائی تھی جس میں آئیسا، این ایس یو آئی، ایس ایف آي ، سی وائی سی ایس سمیت مختلف طلبہ تنظیموں کے کارکن شامل تھے۔

Loading...

Loading...

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز