سپریم کورٹ میں سوامی کے خلاف شکایت، رام مندر پر سماعت کے دوران کیسے پہنچے

سپریم کورٹ میں رام مندر معاملے کی سماعت کے دوران سوامی کی موجودگی کو لے کر ایک شکایت درج کروائی گئی ہے۔

Mar 30, 2017 02:56 PM IST | Updated on: Mar 30, 2017 03:00 PM IST

نئی دہلی۔ سپریم کورٹ میں سبرامنیم سوامی کے خلاف ایک شکایت درج کرائی گئی ہے۔ کورٹ میں رام مندر معاملے کی سماعت کے دوران سوامی کی موجودگی کو لے کر یہ شکایت درج کروائی گئی ہے۔ رجسٹرار سے کی گئی اس شکایت میں کہا گیا ہے کہ پچھلی بار جب سوامی سماعت کے دوران موجود تھے تو انہیں نہیں بتایا گیا۔ یہی نہیں شکایت میں یہ بھی کہا گیا کہ سپریم کورٹ نے ابھی تک سوامی کو رام مندر معاملے میں پارٹی بننے کی اجازت نہیں دی ہے پھر بھی وہ ہر سماعت میں موجود رہتے ہیں۔ اس صورت میں درخواست گزار اقبال انصاری کے وکیل نے یہ شکایت کی ہے جس پر جمعہ کو ہی سماعت ہوگی۔

ہاشم انصاری کے بیٹے ہیں اقبال انصاری

سپریم کورٹ میں سوامی کے خلاف شکایت، رام مندر پر سماعت کے دوران کیسے پہنچے

پی ٹی آئی

اقبال انصاری ہاشم انصاری کے بیٹے ہیں۔ ہاشم انصاری کے انتقال کے بعد اقبال انصاری ہی اس کیس کے درخواست گزار بنے ہیں۔ اقبال نے شکایت کی ہے کہ پچھلی بار 23 تاریخ کو کورٹ کے سامنے سوامی نے مطالبہ رکھا تھا کہ اس کیس کی روزانہ سماعت ہو اور اس کے لئے سماعت فکس کی جائے۔ اقبال کی شکایت ہے کہ سوامی دوسرے فریق کو اطلاع نہیں دیتے۔ جبکہ دوسرے فریق کو بھی اس بارے میں معلومات دی جانی چاہئے تاکہ وہ بھی اپنا موقف رکھ سکے، لیکن بار بار یہ بتانے پر بھی سوامی دوسرے فریق کو اس کی اطلاع نہیں دیتے۔

پہلے بھی رام مندر پر تبصرہ کر چکے ہیں سبرامنیم سوامی

بتا دیں کہ کچھ دن پہلے سبرامنیم سوامی نے رام مندر مسئلے پرکئی ٹویٹ بھی کئے تھے۔ مندر مسئلے پر سوامی نے لکھا تھا کہ مسلم ان کی سریو پار مسجد بنانے کی تجویز مان لیں ورنہ 2018 میں ان کی حکومت مندر کی تعمیر کے لئے قانون بنانے کا کام کرے گی۔ دوسرے ٹویٹ میں سوامی نے لکھا تھا کہ سپریم کورٹ کی اجازت سے 1994 سے ہی رام جنم بھومی میں رام للا کا عارضی مندر براجمان ہے اور وہاں پوجا بھی جاری ہے۔ کیا اسے کوئی گرانے کی ہمت کر سکتا ہے؟

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز