اب تین طلاق دی تو شوہر کو ملے گی سزا

May 05, 2017 01:53 PM IST | Updated on: May 05, 2017 01:55 PM IST

سنبھل : تین طلاق کو لے کر ملک بھر میں چھڑی بحث کے درمیان مسلمانوں کی ترک برادری نے اپنے معاشرے میں ایک ساتھ تین طلاق دینے پر پابندی لگانے کا اعلان کیا ہے اور کہا ہے کہ اب تین طلاق کے معاملہ میں ساری غلطی شوہر کی مانی جائے گی۔ ساتھ ہی ساتھ پنچایت کو اس سزا دینے کا حق حاصل ہوگا۔

سنبھل کے نزدیک 55 گاوں میں پھیلی تقریبا 50 ہزار آبادی والی ترک برادری کی پنچایت جمعرات کو حاجی پور گاؤں میں ہوئی ، جس میں بڑی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی ۔ پنچایت کی صدارت کرنے والے اسرار احمد نے بتایا کہ پنچایت نے ایک ہی مرتبہ میں تین طلاق دینے کے عمل کو غلط قرار دیتے ہوئے کہا کہ میٹنگ میں ترک برادری میں اس پر پابندی لگانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔

اب تین طلاق دی تو شوہر کو ملے گی سزا

انہوں نے بتایا کہ پنچایت کا کہنا ہے کہ گھریلو جھگڑوں کو لے کر ایک مرتبہ میں تین طلاق نہیں دی جائے۔ اگر کوئی ایک مرتبہ میں تین طلاق دیتا ہے تو اس صورت میں پنچایت مکمل غلطی شوہر کی ہی مانے گی اور پنچایت کو لڑکے کو سزا دینے کا حق حاصل ہو گا۔

احمد نے بتایا کہ اگر کسی شخص کا اپنی بیوی سے کوئی تنازع ہے تو پہلے اپنی شکایت پنچایت میں رکھے۔ کس طرح کے بھی حالات ہوں، مگر ایک مرتبہ میں تین طلاق نہیں دیں۔ اگر ضروری ہو تو ایک بار طلاق کہیں اور بیوی کو کم از کم ایک ماہ کا وقت دیں۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز