ٹرینوں میں اے سی ٹو ٹائر ہوگا بند ، اے سی تھری کے ڈبوں میں اضافہ ، فلیکسی کرایہ سسٹم بھی واپس لینے کا اشارہ

Apr 20, 2017 08:03 PM IST | Updated on: Apr 20, 2017 08:03 PM IST

نئی دہلی : ریلوے نے ایرکنڈیشنڈ سیکنڈ کلاس کے ڈبوں کو مرحلہ وار ہٹانے اور ان کی جگہ ایر کنڈیشنڈ تھری ٹائر (اے سی 3) کوچوں کی تعداد بڑھانے کا فیصلہ کیا ہے اور اشارے دئے ہیں کہ مسافروں کی مخالفت کی وجہ سے فلیکسی کرایہ سسٹم کو واپس لے کر تمام گاڑیوں کے بنیادی کراے میں یکساں اضافہ کیا جائے گا۔

ریلوے بورڈ کے ذرائع نے بتایا کہ ریلوے کی تیرہ ہزار مسافر گاڑیوں میں دھیرے دھیرے اے سی 2 کوچوں کو کم کرتے ہوئے بند کیا جائے گا او ران کی جگہ اے سی 3 کوچوں کی تعداد بڑھائی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ جن مسافرگاڑیوں میں بیس یا 22کوچ لگتے ہیں اور انہیں 24 کوچ کی گاڑی بنانے کا فیصلہ کیا گیا ہے ان میں اے سی 3کوچ ہی بڑھائے جائیں گے۔ کیوں کہ اے سی تھری کوچ والی گاڑیوں سے کچھ منافع بھی ہورہا ہے۔

ٹرینوں میں اے سی ٹو ٹائر ہوگا بند ، اے سی تھری کے ڈبوں میں اضافہ ، فلیکسی کرایہ سسٹم بھی واپس لینے کا اشارہ

راجدھانی ، شتابدی، دورنتو گاڑیوں میں فلیکسی کرایہ سسٹم کے بارے میں اشارہ دیا گیا ہے کہ اس سسٹم کو واپس لینے کے لئے متبادل طریقوں پر غور کیا جارہا ہے۔ یہ بھی سوچا جارہا ہے کہ تمام گاڑیوں کے کراے میں دس سے پندرہ فیصد کا اضافہ کیا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ مابانہ سیزن ٹکٹ کے کرایوں کو بڑھانے کے بارے میں بھی غور کیا جارہا ہے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز