مسلمانوں کو اقلیت کے دائرے سے باہر کردیا جاناچاہئے : مرکزی وزیر گری راج سنگھ

Mar 05, 2017 12:39 PM IST | Updated on: Mar 05, 2017 12:39 PM IST

نئی دہلی : ایک طرف جہاں یوپی اسمبلی انتخابات کے دوران پولرائزیشن کی سیاست زوروں پر ہے اور سیاسی لیڈران مختلف ہتھکنڈے اور مذہبی بیانات دے رہے ہیں ، وہیں دوسری طرف بی جے پی کے فائر برانڈ لیڈر اور مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے ایک نئی بحث چھیڑ دی ہے ۔ گری راج سنگھ کا کہنا ہے کہ مسلمانوں کو اقلیت کے دائرے سے باہر کردیا جاناچاہئے ۔ گری راج نے اس کیلئے پیو ریسرچ کے رپورٹ کابھی حوالہ دیا ۔

مرکزی وزیر گری راج سنگھ نے کہا کہ ملک میں مسلمانوں کو اقلیت کے دائرے سے باہر لایا جانا چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ اس پر بحث ہونی چاہئے کیونکہ پیو ریسرچ کے مطابق 2050 تک دنیا میں سب سے زیادہ مسلم آبادی ہندوستان میں ہوگی۔ گری راج کے مطابق ملک میں ایک بحث چھیڑی جانی چاہئے کہ آخر اقلیتی کون ہوگا؟

مسلمانوں کو اقلیت کے دائرے سے باہر کردیا جاناچاہئے : مرکزی وزیر گری راج سنگھ

خیال رہے کہ واشنگٹن میں واقع پیو ریسرچ سینٹرنے حال ہی میں دی فیوچر آف ورلڈ رليجن نامی ایک رپورٹ شائع کی ہے۔ اس کے مطابق 2010 سے 2050 کے درمیان مسلمانوں کی آبادی میں 73 فیصد اضافہ ہوگا۔جبکہ آبادی میں اضافہ کی شرح میں ہندو تیسرے مقام پر ہیں، جن کی آبادی 34 فیصد کی شرح سے بڑھ رہی ہے۔ رپورٹ کے مطابق مسلم آبادی اگر اسی شرح سے بڑھتی رہی ہے ، تو 2050 تک ہندوستان میں مسلمانوں کی آبادی 30 کروڑ ہو جائے گی، جو دنیا میں کسی بھی ملک کے مقابلہ میں سب سے زیادہ ہوگی۔

مرکزی وزیر نے وزیر اعظم مودی کے روڈ شو پر سوال اٹھانے والے لوگوں کی بھی تنقید کی ۔گری راج نے کہا کہ وزیر اعظم کی ریلی اور روڈ شو پر سوالیہ نشان لگانے والے لوگوں کو سیاست کا علم کم ہے۔ گری راج نے کہا کہ مودی ملک کے پہلے وزیر اعظم ہیں ، جو براہ راست بات چیت کیلئے لوگوں سے جڑ رہے ہیں۔ خواہ وہ ریلی ہو یا پھر روڈ شو۔

انہوں نے کہا کہ مودی پہلے وزیر اعظم ہیں ، جو براہ راست عوام سے بات چیت کر رہے ہیں اور یہ ہندوستان کے لئے ایک خوش آئند بات ہے۔ نوادہ سے بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ نے کہا کہ میں سمجھتا ہوں کی اس بڑی پارٹی یعنی بی جے پی کو آگے بڑھانا چاہئے۔ وزیر اعظم بی جے پی کی جانب سے روڈ شو کر رہے ہیں اور وہ حکومت کی پالیسیوں کو بتا رہے ہیں۔

خیال رہے کہ وزیر اعظم مودی کے ہفتہ کو بنارس میں ہوئے روڈ شو پر اپوزیشن کے ساتھ ساتھ مرکزی وزیر اوپیندر کشواہا اور بی جے پی کے ممبر پارلیمنٹ شتروگھن سنہا نے بھی سوالات کھڑے کئے تھے۔

متعلقہ اسٹوریز

ری کمنڈیڈ اسٹوریز